2جوہری طاقتوں کے مابین سرحدی کشیدگی انتہائی تشویشناک ہے ،حریت کانفرنس

2جوہری طاقتوں کے مابین سرحدی کشیدگی انتہائی تشویشناک ہے ،حریت کانفرنس

سرینگر(اے این این)کل جماعتی حریت کانفرنس (ع) نے بھارت اور پاکستان کے درمیان بڑھتی ہوئی سرحدی کشیدگی کو انتہائی تشویشناک صورتحال قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ دو جوہری ہمسایہ مملکتوں کے درمیان گزشتہ کئی دہائیوں سے جو کشیدہ تعلقات چلے آرہے ہیں اس کی بنیادی وجہ مسئلہ کشمیر ہے اور جب تک اس مسئلے کو اس کے تاریخی تناظر میں حل کرنے کیلئے سنجیدہ اور سیاسی جرات مندی سے عبارت اقدامات نہیں اٹھائے جاتے اس خطے میں دائمی امن اور استحکام کی توقع نہیں کی جا سکتی ۔ ترجمان نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے حل تک اس پورے خطے سے مخاصمت اور بے چینی کے ماحول کا خاتمہ نا ممکن ہے کیونکہ اس مسئلے کی وجہ سے جنوبی ایشیا کی دو جوہری مملکتیں گزشتہ سات دہائیوں سے کشیدگی اور مخاصمانہ تعلقات کی شکار ہیں اور اس کے ساتھ ہی جموں کشمیر کے سوا کروڑ عوام غیر یقینی صورتحال سے دوچار ہیں۔ ترجمان نے کہا کہ جنوب ایشیا ئی خطے کے دائمی امن اور استحکام کیلئے مسئلہ کشمیر کا حق خودارادیت کی بنیاد پر ایک منصفانہ اور پائیدار حل ایک ناگزیر حقیقت ہے اور ہندوستان کی سیاسی قیادت جتنی جلد اس حقیقت کو سمجھ کر تسلیم کرلیتی ہے۔

اتنی ہی جلد اس خطے سے غیر یقینی اور عدم استحکام کی صورتحال کا خاتمہ ہو سکتا ہے۔

مزید : عالمی منظر