باغبان پھلدار پودوں کی خصوصی دیکھ بھال یقینی بنانے کی ہدایت

باغبان پھلدار پودوں کی خصوصی دیکھ بھال یقینی بنانے کی ہدایت

  

فیصل آباد (بیورورپورٹ)رواں ماہ جون کے دوران بارشوں کی کمی، گرم ہوائیں، لو چلنے سے پھلدار پودوں کو شدید نقصان پہنچ سکتاہے لہٰذا باغبان پھلدار پودوں کی خصوصی دیکھ بھال یقینی بنائیں اور بوقت ضرورت شام کو آبپاشی بھی کریں۔ ماہرین زراعت نے بتایاکہ پنجاب کے میدانی اور جنوبی علاقے اس وقت شدید گرمی کی لپیٹ میں ہیں جہاں درجہ حرارت 45سے50ڈگری سینٹی گریڈ کے درمیان ہے جو پھلوں کیلئے انتہائی نقصان دہ ہے کیونکہ پھلدار پودے زیادہ سے زیادہ 45 ڈگری سینٹی گریڈ درجہ حرارت برداشت کرنے کی صلاحیت رکھتے ہیں اور اس سے زائد گرمی پر پھل جھلس جاتاہے، اس کے چھلکے پھٹ جاتے ہیں اور اس کی کوالٹی بری طرح متاثر ہو تی ہے۔ انہوں نے بتایاکہ باغبان نرسری سے نئے پودے لاتے وقت اس بات کا خیال رکھیں کہ پیوند کی اونچائی 12 سے 15 انچ سے زائد نہ ہو۔انہوں نے کہاکہ نئے لگائے گئے آم، کھجور، لیچی کے پودے گرمی سے زیادہ متاثر ہو سکتے ہیں اس لئے ان پودوں پر سائے کا مناسب بندوبست بھی ضروری ہے۔ انہوں نے کہاکہ باغبان مزید رہنمائی کیلئے ماہرین زراعت سے بھی رابطہ کرسکتے ہیں۔

مزید :

کامرس -