جعلی اکاؤنٹس کیس، وزیر اعلیٰ سندھ نیب راولپنڈی میں پیش،بیان ریکارڈ

  جعلی اکاؤنٹس کیس، وزیر اعلیٰ سندھ نیب راولپنڈی میں پیش،بیان ریکارڈ

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) جعلی اکاؤنٹس اور سولر لائٹس کے ٹھیکوں کے کیس میں نیب نے وزیراعلی سندھ کا ابتدائی بیان ریکارڈ کرلیا۔ مراد علی شاہ نے نیب کی کمبائنڈ انوسٹی گیشن ٹیم کو بیان ریکارڈ کرایا۔ وزیراعلیٰ سندھ کو سولر لائٹس کے غیر قانونی ٹھیکوں کے کیس میں سوالنامہ بھیجا جائے گا، مراد علی شاہ پر اعتراضات کے باوجود ٹھیکوں کے فنڈز جاری کرنے کا الزام ہے۔ سولر لائٹس کیس میں 7 ملزمان پلی بارگین جبکہ ایک وعدہ معاف گواہ بن چکا ہے، سولر لائٹس کیس میں مرکزی ملزم شرجیل انعام میمن ضمانت پر ہیں۔نیب پیشی کے بعد وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا نیب کو کہا ہے آپ کا بڑا دل گردہ ہے وباء کے حالات میں بھی کام کر رہے ہیں، نیب کا سوال تھا سکیم بجٹ میں نہیں تھی، بعد میں منظوری دی گئی، بجٹ میں شامل نہ ہونیوالی سکیم کی آئین کے مطابق اجازت دی جاسکتی ہے، ہم نے اسمبلی کی منظوری کے بعد یہ سکیم شروع کی تھی۔مراد علی شاہ کا کہنا تھا حکومت کی جانب سے کورونا سے متعلق متضاد پیغامات عوام تک گئے، کراچی میں کورونا وباء زیادہ ہے، کورونا سے متعلق عوام کو پیغام جانا چاہئے کہ یہ سنجیدہ مسئلہ ہے، کئی علاقوں میں ایس او پیز فالو نہیں ہو رہے، کورونا سے متعلق اقدامات طبی ماہرین کی مشاورت سے کئے گئے۔

جعلی اکاؤنٹس کیس

مزید :

صفحہ اول -