طیارہ حادثہ ، اداکارہ ماہرہ خان پی آئی اے پر برس پڑیں

طیارہ حادثہ ، اداکارہ ماہرہ خان پی آئی اے پر برس پڑیں
طیارہ حادثہ ، اداکارہ ماہرہ خان پی آئی اے پر برس پڑیں

  

کراچی(ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن کے ایک طیارے کو گزشتہ دنوں پیش آئے حادثے پر گہرے رنج و غم  اور غصے کے اظہارکا سلسلہ تاحال جاری ہے۔اس حوالے سے نامور ادکارہ ماہرہ خان برس پڑیں اور انہوں نے پی آئی اے کی غلطی کو ناقابل معافی قراردیا ہے۔

اس حوالے سے سانحے میں جاں بحق افراد کے عزیزوں کی جانب سے پی آئی اے انتظامیہ کی بدانتظامی پر بھی کڑی تنقید کی جارہی ہے۔پی کے 8303 حادثے میں جاں بحق ہونے والے  زین پولانی کے ایک قریبی عزیز نے سماجی روابط کی ویب سائٹ پر پی آئی اے کی نااہلی کا پول کھول دیا ہے۔ 

کمیل پولانی نے اپنے ٹوئٹ میں بتایا کہ 'زین پولانی کے دو بچوں کی نماز جنازہ اور تدفین ہو گئی ہے جب کہ ان کے ایک بچے کی لاش حکام کی نااہلی کے باعث 11 دن قبل کسی اور خاندان کے سپرد کر دی گئی تھی جسے اس خاندان نے دفنا بھی دیا'۔

کمیل پولانی نے اپنے ٹوئٹ میں وزیراعظم عمران خان، پی آئی اے اور مرتضیٰ وہاب  کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہم اس معاملے پر سخت تحقیقات کا مطالبہ کرتے ہیں۔

 کمیل کی پوسٹ پر جہاں پاکستانیوں کی بڑی تعداد نے ردعمل دیا وہیں نامور اداکارہ ماہرہ خان بھی چپ نہ رہ سکیں۔ پوسٹ پر ردعمل دیتے ہوئے ماہرہ خان نے کہا کہ 'پی آئی اے کی بد انتظامی نا قابل معافی ہے، یہ لواحقین کے خاندان کے لیے کبھی نہ ختم ہونے والا بھیانک خواب ہے'۔

خیال رہے کہ 22 مئی کو لاہور سے کراچی آنے والی پی آئی اے کی پرواز لینڈنگ کے دوران آبادی پر گر کر تباہ ہوگئی تھی جس کے نتیجے میں جہاز میں سوار عملے کے 8 ارکان سمیت 97 مسافر جاں بحق ہوگئے تھے جب کہ 2 مسافر معجزانہ طور پر محفوظ رہے تھے۔

طیارے حادثے کی وجہ انجنوں کی ناکامی اور لینڈنگ گیئر کے نہ کھلنے کو قراردیاجاتا ہے۔

مزید :

تفریح -