حکومت نے پٹرول مصنوعات کی قیمتیں بڑھا کر عوام دشمنی کی انتہا کردی:رئیل اسٹیٹ ایجنٹس

  حکومت نے پٹرول مصنوعات کی قیمتیں بڑھا کر عوام دشمنی کی انتہا کردی:رئیل ...

  

       لاہور (انٹرویو:میاں اشفاق انجم) ایک ہفتے میں دوسری دفعہ پٹرول مصنوعات میں 30 روپے اضافہ عوامی دشمنی کی انتہا کر دی گئی،مہنگائی کا الزام گزشتہ حکومتوں پر ڈالنا عوام کو دھوکہ دینے کے مترادف ہے۔وفاقی بجٹ میں رئیل اسٹیٹ سیکٹر پر کوئی نیا ٹیکس نہ لگایا جائے۔سی وی ٹی اور اشٹام ڈیوٹی میں اضافہ پراپرٹی کے کاروبار کا دھڑن تختہ کر سکتا ہے،روپے کی بے قدری روکنے کے لئے ڈالر کی سمگلنگ کے آگے پل باندھنا ضروری ہے۔ ملکی معیشت کی ڈوبتی ناؤ کو رئیل اسٹیٹ سیکٹر اور اوورسیز پاکستانی پار لگا سکتے ہیں۔آن بورڈ لیا جائے ان خیالات کا اظہار بحریہ ٹاؤن لاہور کے سینئر ترین رئیل اسٹیٹ ایجنٹس مظفر ہاشمی، میاں اطہر، شاہد قادری،حافظ سجاد انور،عمران نیازی، رانا شیر آصف، مجاہد قادری، حق نواز، نعیم بھٹی، سرفراز احمد نے وفاقف بجٹ2022ء کے حوالے سے تجاویز دیتے ہوئے روزنامہ ”پاکستان“سے خصوصی گفتگو میں کیا۔مظفر ہاشمی نے کہا ایک ہفتے میں 60روپے اضافہ عوام کا معاشی قتل ہے۔میاں اظہر نے کہا کمر توڑ مہنگائی کی وجہ سے عوام کا جینا دوبھر ہو گیا ہے۔شاہد قادری نے کہا وفاقی بجٹ کو ٹیکس فری کیا جائے۔حافظ سجاد انور نے کہا گزشتہ حکومت کی طرف سے تعمیراتی پیکیج دینے اور گھر بنانے کے لئے ایمنسٹی سکیم دینے کے کاروبار پر مثبت اثرات مرتب ہوئے تھے۔عمران نیازی نے کہا وفاقی بجٹ میں تعمیراتی پیکیج دیا جائے۔رانا شیر آصف، مجاہد قادری نے کہا گھر بنانے کے لئے ایمنسٹی سکیم سمیت بیرون ملک سے سرمایہ کاری کرنے والوں کو خصوصی پیکیج دینے کی ضرورت ہے۔حق نواز، نعیم بھٹی اور سرفراز احمد نے کہا ملکی معیشت کی مضبوطی میں رئیل اسٹیٹ اور اوورسیز پاکسانی اہم کردار ادا کر سکتے ہیں۔بیرون ممالک میں موجود پاکستانی اگر پراپرٹی میں سرمایہ کاری کرنا چاہیں تو انہیں ٹیکس فری کیا جائے۔انہوں نے کہا رئیل اسٹیٹ سیکٹر، بلڈر اور ڈویلپرز کو آن بورڈ لینے کے ساتھ اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی ریلیف پیکیج دیا جائے۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -