پاکستان میں پانی، پن بجلی کے شعبوں کی ترقی کیلئے کثیر جہتی حکمت عملی پر کام کررہا ہے: مزمل حسین 

پاکستان میں پانی، پن بجلی کے شعبوں کی ترقی کیلئے کثیر جہتی حکمت عملی پر کام ...

  

لاہور (خصوصی رپورٹ)سابق چیئرمین واپڈا لیفٹیننٹ جنرل (ریٹائرڈ) مزمل حسین کو انٹر نیشنل کمیشن آن لارج ڈیمز (آئی کولڈ) کی 27ویں کانگریس کے اختتامی سیشن میں خطاب کیلئے مدعو کیا گیا۔ ایک ہفتہ طویل کانفرنس 27 مئی سے 3جون تک فرانس میں منعقد ہوئی جس میں دنیا بھر سے 1400ماہرین نے شرکت کی۔ لیفٹیننٹ جنرل (ریٹائرڈ) مزمل حسین کو یہ اعزاز پاکستان میں میگاڈیمز کی ترقی میں اْن کے کلیدی کردار کے اعتراف میں دیا گیا۔ آئی کولڈ میگاڈیمز کی تعمیر، مینٹیننس تعمیراتی معیار، فنی مہارت اور پیشہ ورانہ معلومات کے تبادلے کیلئے قائم کیا گیا ایک ادارہ ہے۔ 104ممبرممالک پر مشتمل یہ ادارہ اِس بات کو یقینی بناتاہے کہ ڈیمز کی تعمیر محفوظ، مؤثر، معاشی استحکام اور کم سے کم ماحولیاتی اثرات کے معیار کو مدِ نظررکھ کر کی جائے۔اِس ضمن میں معیار اور گائیڈز لائن کو ملحوظ خاطر رکھا جاتا ہے۔آئی کولڈ کی ٹیکنیکل گائیڈز لائنز ڈیم کے ڈیزائن اور سیفٹی کے مطابق جدید معیار کی روشنی میں تیار کی جاتی ہیں اور پراجیکٹس کی تعمیر میں اِن گائیڈ لائیز اور معیار کا پوری طرح سے خیال رکھا جاتا ہے۔ سابق چیئرمین واپڈا لیفٹیننٹ جنرل (ریٹائرڈ) مزمل حسین نے آئی کولڈ کانگریس کو پاکستان میں پانی اور پن بجلی کے شعبوں کی ترقی کے حوا لے سے واپڈا پراجیکٹس کے متعلق آگاہ کیا۔ا ْنہوں نے کہا واپڈا ”ڈیکیڈ آف ڈیمز“ کے ویڑن کے تحت پاکستان میں پانی اور پن بجلی کے شعبوں کی ترقی کیلئے نئی اور ہمہ جہت مالیتی حکمت عملی کے ذریعے کثیر جہتی حکمت ِ عملی پر کام کر رہا ہے۔اِن منصوبوں سے 35ہزار ملازمتوں کے مواقع بھی میسر آئیں گے اور دور افتادہ اور پسماندہ علاقوں میں سماجی اور معاشی استحکام بھی آئے گا۔ 

مزمل حسین

مزید :

کامرس -