چلڈرن ہسپتال میں آتشزدگی، کروڑوں روپے مالیت کی ادویات خاکستر، وزیراعلیٰ کا نوٹس، انکوائری کمیٹی بنادی

چلڈرن ہسپتال میں آتشزدگی، کروڑوں روپے مالیت کی ادویات خاکستر، وزیراعلیٰ کا ...

  

لاہور(جنرل رپورٹر،کرائم رپورٹر)چلڈرن ہسپتال میں آتشزدگی سے کروڑوں روپے مالیت کی ادویات جل کر خاکستر ہوگئیں، وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہبازنے آتشزدگی کا نوٹس لے لیا اورسیکرٹری صحت سے واقعے کی تحقیقاتی رپورٹ پیش طلب کرلی او انکوائری کمیٹی بھی تشکیل دیدی۔تفصیلات کے مطابق چلڈرن ہسپتال میں لگی آگ پر7 گھنٹے بعد قابو پالیاگیا۔ریسکیو کی 20 گاڑیوں اور 60 ورکرز نے آپریشن میں حصہ لیا۔ چلڈرن ہسپتال کے تھرڈ فلور پر میڈیکل سٹور میں آگ پر 7گھنٹے بعد قابو پایا لیا گیا۔ تیسرے فلورپر میڈیکل سٹورمیں صبح5 بجے آگ لگی،راستہ تنگ ہونے کی وجہ سے ریسکیوٹیموں کو آگ پرقابوپانے میں مشکلات سامنا رہا۔ تاہم کوئی جانی نقصان رپورٹ نہیں ہوا۔دریں اثناء سیکرٹری صحت پنجاب علی جان خان نے ایڈیشنل سیکرٹریز ٹیکنیکل ڈاکٹر شاہد لطیف اور عاصم الطاف کے ہمراہ چلڈرن ہسپتال کے آؤٹ ڈورکاتفصیلی دورہ کیا۔اس موقع پر میڈیکل ڈائریکٹر چلڈرن ہسپتال ڈاکٹر سلیم اورریسکیوحکام موجودتھے۔سیکرٹری صحت علی جان خان نے آتشزدگی کے زدمیں آنیوالی آؤٹ ڈورکی تیسری منزل کادورہ کیااورکولنگ پراسیس کاجائزہ لیا۔سیکرٹری صحت علی جان خان نے کہا کہ چلڈرن ہسپتال لاہورمیں آتشزدگی کے واقعہ کی مکمل تحقیقات کرکے وزیراعلیٰ پنجاب کورپورٹ پیش کی جائے گی۔ ایم ڈی چلڈرن ہسپتال پروفیسر سلیم نے کہا کہ آگ شارٹ سرکٹ کے باعث لگی، آگ لگنے سے 4 سے 5 کروڑ روپے مالیت کا نقصان ہوا ہے، آتشزدگی کے واقعہ میں ادویات کے علاوہ فرنیچر، اے سی اور دیگر سامان بھی خاکستر ہوگیا۔صوبائی وزیرصحت خواجہ سلمان رفیق نے چلڈرن ہسپتال کا دورہ کرے کولنگ پراسس کا جائزہ لیا،اس موقع پر انہوں نے کہا جلنے والی ادویات فوری منگوائی جائیں گی، سروسز بھی جلد بحال کردیں گے۔دوسری جانب آگے لگنے کے معاملے کی جانچ کے لیے وزیراعلی پنجاب حمزہ شہباز نے انکوائری کمیٹی تشکیل دیدی۔

چلڈرن ہسپتال

مزید :

صفحہ اول -