انتخابات میں جعلی ڈگریوں والے بھی حصہ لے سکیں گے، جسٹس (ر) ریاض کیانی

انتخابات میں جعلی ڈگریوں والے بھی حصہ لے سکیں گے، جسٹس (ر) ریاض کیانی

لاہور(ثناءنیوز)ممبر الیکشن کمیشن آف پاکستان جسٹس (ر) ریاض کیانی نے کہا ہے کہ آئندہ عام انتخابات میں جعلی ڈگریوں والے بھی حصہ لے سکیں گے، تاہم ا±ن کو الیکشن کے بعد ڈگری جعلی ثابت ہونے پراپنی سیٹ سے ہاتھ دھونا پڑے گا۔ لاہور میں پولنگ سٹاف کے ٹریننگ پروگرام کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ممبر الیکشن کمیشن کا کہنا تھا کہ ہائر ایجوکیشن کمشن اور متعلقہ یونیورسٹی سے جعلی ڈگری کی تصدیق کے بعد متعلقہ سیشن جج سے سزا ملنے پر الیکشن کمیشن کسی پارلیمنٹرین کو نااہل قرار دے سکتا ہے۔ ا±ن کا کہنا تھا کہ سیشن جج سے سزا یافتہ پارلیمنٹرین کو الیکشن کے بعد بھی نااہل قرار دیا جا سکتا ہے۔ الیکشن کمیشن پر کچھ سیاسی لوگوں کے اعتراضات کے سوال پر جسٹس (ر) ریاض کیانی کا کہنا تھا کہ وہ تو دن رات آزاد اور شفاف انتخابات کے انعقاد کے لیے کام کر رہے ہیں پھر بھی کچھ لوگ ا±ن کی کارکردگی سے کیوں مطمئن نہیں۔ قبل ازیں پولنگ سٹاف کے ٹریننگ پروگرام کے حوالے سے بتایا گیا کہ عام انتخابات کے انعقاد کے لیے ک±ل چھ لاکھ پولنگ سٹاف کو ٹریننگ دی جائے گی جو الیکشن سے دس روز قبل مکمل ہو جائے گی۔

ریاض کیانی

مزید : صفحہ آخر