ایل ڈی اے کی گرین ایریا پر تعمیرات کرنے والی نجی سکیم کے خلافکارروائی

ایل ڈی اے کی گرین ایریا پر تعمیرات کرنے والی نجی سکیم کے خلافکارروائی

 لاہور(ایم آئی بھٹی)المصطفیٰ گارڈن ہاؤسنگ سکیم کے مالکان نے لاہور کے ماسٹر پلان کی دھجیاں اڑاتے ہوئے4ہزار کنال پر مشتمل گرین ایریا پرسڑکیں بناتے ہوئے سینکڑوں افراد کو پلاٹوں کی الاٹمنٹ کر دی ۔ایل ڈی اے نے کارروائی کرتے ہوئے گرین ایریا میں سڑکوں کی تعمیر اور پلاٹوں کی خرید و فروخت رکوا دی جس سے خریداروں میں پریشانی کی لہر دوڑ گئی۔تفصیلات کے یہ سکیم جڑانوالہ روڈ نز فیض پور انٹر چینج پر واقع ہے اورگرین ایریا ایگریکلچرل لینڈ کیلئے استعمال ہوتا ہے اس حدود میں کسی قسم کی تعمیرات اور فروخت غیر قانونی ہیں۔اس کے باوجود المصطفی ٰ گارڈن کے مالکان نے غیر قانونی طور پر سکیم بنا کر سینکڑوں لوگوں میں پلاٹ فروخت کر دیئے ہیں جس کے بعد ایل ڈی اے کے شعبہ ٹاؤن پلاننگ اور سی این پی ونگ نے مشترکہ طور پر کارروائی کرتے ہوئے موقع پر تعمیرا ت کو مسمار کر کے سڑکوں کا کام رکوا دیا ۔اس حوالے سے ایل ڈی اے افسران کا کہنا ہے کہ ایل ڈی اے نے کئی بار اخباروں میں اشتہار دیئے ہیں کہ غیر رجسٹرڈ شدہ سکیموں میں پلاٹوں کی خرید و فروخت نہ کی جائے مگر اس کے با وجود لوگوں نے پلاٹ خریدے ہیں اور اس فراڈ کے ذمہ دار بھی خریدار ہیں جبکہ محکمہ غیر قانونی کام کرنے والوں کیخلاف قانونی کارروائی کرے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1