لاہور میں پی ایس ایل کا فائنل

لاہور میں پی ایس ایل کا فائنل
 لاہور میں پی ایس ایل کا فائنل

جناب عمران خان کا کہنا ہے کہ لاہور میں پی ایس ایل کا فائنل کروانا پاگل پن ہے جی ہاں دوستو اور بہت سے دوست جو ہیں ہمارے وہ جناب خان کے اس بیان کو ہی پاگل پن قرار دے رہے ہیں ن جی ہاں دوستو گو کہ حالات برے ہیں لیکن اتنے بھی برے نہیں کہ ہم دنیا کے سامنے ڈھنڈورا پیٹنا شروع کر دیں جی ہاں دوستوں ویسے بھی سیانے کہتے ہیں کہ کہ بہر حال اب ہم سیانوں کاْ کیا بتائیں کیا کہا انھوں نے لیکن جو جو کچھ بھی جناب خان نے کہا وہ سب نے سن لیا اور جناب خان کو بہت سے لوگ ماسٹر آف یو ٹرن کہتے ہیں اسی لئے انکی باتوں پر کان نہیں دھرتےْ جی ہاں دوستو بالکل تاہم ہمیں تو حیرت ہو رہی ہے کہ پہلے تو جناب خان اور انکے ہمنوا پر جوش تھے کہ فائنل لاہور میں ہی کروایا جائے اور اب جبکہ وزیراعظم پاکستان نے باقاعدہ اعلان بھی کر دیا کہ پی ایس ایل کا فائنل لاہور میں ہی ہو گا تو جناب خان اور انکے ہمنوا پلٹا مار گئے اور الٹے سیدھے بیانات دینے شروع کر دئیےْ جی ہاں دوستوں پی ایس ایل کے فائنل کو لاہور میں منعقد کروانے کے انتظامات مکمل کرلئے گئے ہیں تاہم قذافی سٹیڈیم اور ارد گرد کا علاقہ سیل کر دیا گیا جی ہاں قذافی اسٹیڈیم کے احاطے میں موجود تمام ہوٹل اور دکانیں بند کروا دی گئی ہیں تاہم نجم سیٹھی نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ لاہور میں پی ایس ایل کا فائنل کروانا اچھا قدم ہے مزید کہنا تھا کہ پی ایس ایل کی یہ بھی حقیقت ہے کہ دنیا بھر کی نظریں جو ہیں وہ پاکستان پی ایس ایل کے فائنل پر ہی ہیں اور دنیا بھر کے کھلاڑی جو ہیں وہ بھی پی ایس ایل میں حصہ لے رہے ہیں. بہر حال دوستو پی ایس ایل کا فائنل پاکستانی حکومت کے لئے بھی امتحان ہے اور عوام کے لئے بھی ایک امتحان ہی سمجھیں جی ہاں دوستو یقیناً سب کی دعا ہے کہ اللہ کرے پی ایس ایل کا فائنل بخیر و خوبی ہو جائے۔

جی ہاں دوستو یہ بات بھی حقیقت ہے کہ طویل مدت کے بعد پاکستان میں کرکٹ کا میچ ہو رہا ہے جی ہاں اور انشاء اللہ پی ایس ایل فائنل کے بعد ملک بھر میں بین الاقوامی سطح پر کر کٹ کی بحالی بھی ہو سکے گی بہر حال ہماری کیا پوری قوم اس وقت پی ایس ایل کے کامیاب فائنل میچ کے انعقاد کے لئے پرجوش بھی ہے اور دعا گو بھی کہ اللہ کرے پی ایس ایل کا فائنل میچ بھی بخیر و خوبی منعقد ہو سکے تاکہ دنیا بھر میں کھیلوں کے شائیقین میں بھی یہ پیغام جا سکے کہ پاکستان ہر لحاظ سے پر امن ملک ہے اور یہاں کسی کو چاہے وہ پاکستانی ہو یا غیر ملک سے آیا کوئی مہمان کسی سے کسی قسم کا کوئی خطرہ نہیں بہر حال اجازت آپ سے اس آس و امید کے ساتھ کہ جو بھی ہو آئندہ اچھا ہی ہو ملک کے لئے بھی اور قوم کے لئے بھی تو اجازت چاہتے ہیں آپ سے تو ملتے ہیں جلد ایک بریک کے بعد تو چلتے چلتے اللہ نگھبان رب راکھا ۔

مزید : کالم

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...