2.98 ملین ہیکٹر رقبہ پر چارہ کاشت کیا جاتا ہے، لائیو سٹاک اینڈ ڈیری ڈویلپمنٹ پنجاب

2.98 ملین ہیکٹر رقبہ پر چارہ کاشت کیا جاتا ہے، لائیو سٹاک اینڈ ڈیری ڈویلپمنٹ ...

اسلام آباد (اے پی پی) صوبہ پنجاب میں22.6 ملین ہیکٹر رقبہ پر کاشتکاری کی جاتی ہے جس میں سے 1.1 ملین ہیکٹر رقبہ پر مکئی جبکہ صرف 13 فیصد رقبہ 2.98 ملین ہیکٹر رقبہ پر چارہ کاشت کیا جاتا ہے۔ لائیو سٹاک اینڈ ڈیری ڈویلپمنٹ بورڈ پنجاب کی رپورٹ کے مطابق صوبہ میں چارے کی مجموعی طلب کا اندازہ 200 ملین ٹن ہے جبکہ اس وقت صرف 51 ملین ٹن چارہ کی پیداوار حاصل ہورہی ہے جس سے جانوروں کو چارے کی قلت کا سامنا ہے۔ صوبائی حکومت نے لائیو سٹاک کے شعبہ کو چارے کی قلت کے مسائل سے تحفظ کیلئے مختلف منصوبے شروع کئے ہیں تاکہ جانوروں کو مطلوبہ معیار پر چارے کی فراہمی سے لائیو سٹاک کے شعبہ کی کارکردگی کو بہتر بنایا جاسکے جس سے نہ صرف دودھ اور گوشت کی مقامی ضروریات کو پورا کرنے میں مدد ملے گی بلکہ برآمدات کے فروغ سے قیمتی زرمبادلہ کما کر زرعی معیشت کو بھی ترقی دی جاسکے گی۔

مزید : کامرس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...