جی ڈی پی میں لائیو سٹاک کا 12حصہ ، زراعت کا 56فیصد ہوگیا

جی ڈی پی میں لائیو سٹاک کا 12حصہ ، زراعت کا 56فیصد ہوگیا

لاہور (کامرس رپورٹر)جی ڈی پی میں لائیو سٹاک کاحصہ 11.80اور زراعت کا 55.60 فیصد تک پہنچ گیا ہے جس کے باعث حکومت لائیو سٹاک سیکٹر کی ترقی اور دودھ و گوشت کی شاندار پیداوار کے حصول کیلئے تمام وسائل بروئے کار لا رہی ہے جبکہ اس ضمن میں دیہی خواتین میں بڑی تعداد میں پولٹری یونٹس بھی تقسیم کئے جارہے ہیں جس کے بعد اس منصوبہ کو شہری خواتین تک بھی توسیع دی جائے گی۔ محکمہ لائیو سٹاک وڈیری ڈویلپمنٹ کے ماہرین نے بتایاکہ لائیو سٹاک سیکٹر دیہی معیشت میں اہم کردار ادا کرتا ہے جبکہ 67.435ملین دیہی آبادی لائیو سٹاک کے شعبے سے منسلک ہے ۔انہوں نے بتایا کہ لائیوسٹاک کی پیداوار میں پنجاب کا حصہ 61.2 فیصد جبکہ دودھ اور گوشت کی پیداوار میں 79.1فیصد ہے۔انہوں نے بتایاکہ حکومت صوبہ میں لائیو سٹاک کی پیداوار میں اضافہ ، غربت کے خاتمہ اور دیہی ترقی کیلئے اس شعبہ پر بھر پور توجہ دے رہی ہے تاکہ صوبہ میں خوراک کی خود کفالت کے علاوہ برآمدات میں اضافہ کیا جا سکے۔انہوں نے بتایاکہ وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کے ویژن کے مطابق لائیو سٹاک اور ڈیری ڈویلپمنٹ کی ترقی و بہبود کیلئے گزشتہ سال کے سیلاب میں 1.7ملین روپے کی لاگت سے جانوروں کی خوراک اور چارہ مفت سیلابی علاقوں میں تقسیم کیا گیانیزسیلابی علاقوں میں 5ملین چھوٹے اور بڑے جانوروں کو حفاظتی ٹیکے لگائے گئے ۔انہوں نے بتایاکہ اس عرصہ میں صوبہ پنجاب میں جانوروں کی بیماریوں کو جاننے کے لئے مکمل سروے کیا گیا جس کے تحت 4لاکھ سیمپل اکٹھے کئے گئے نیزغربت کے خاتمے کیلئے دیہی خواتین میں 2200گائے بھینسوں کے بچھڑے اور 2350بھیڑ بکریاں مفت تقسیم کی گئیں ۔انہوں نے بتایاکہ اس منصوبے کے تحت 18ہزار گائے بھینسوں کے علاوہ 36سو بھیڑ بکریاں بھی تقسیم کی جائیں گی ۔انہوں نے بتایاکہ وزیر اعلیٰ پنجاب کی ہدائت پر سال 2015-16ء میں 17سو چھوٹے بڑے جانور سیلاب زدہ علاقوں میں ہلاک ہو نے والے جانوروں کے متبادل کے طور پر تقسیم کئے گئے اور2015-16ء میں 68ہزار پولٹری برڈ بیواؤں اور غریب خواتین میں رعائتی نرخوں پر تقسیم کئے گئے۔انہوں نے بتایاکہ مذکورہ منصوبے کے تحت اڑھائی لاکھ پولٹری برڈ تقسیم کئے جائیں گے۔انہوں نے بتایاکہ صوبہ پنجاب میں جانوروں کے غیر قانونی مذبحہ کے خلاف ایک مکمل مہم شروع کی گئی جس میں گزشتہ سال تین لاکھ کلو گرام گوشت ضبط کیا گیااور2015 افراد کے خلاف مقدمات درج کرکے انہیں2ملین روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔انہوں نے بتایاکہ محکمانہ طور پر ہیلپ لائن 9211 قائم کی گئی ہے تاکہ لوگ دکانوں پر فروخت ہونے والے گوشت کے بارے میں آگاہی حاصل کر سکیں۔انہوں نے بتایاکہ لاہور میں 2ارب روپے کی لاگت سے سٹیٹ آف دی آرٹ سلاٹر ہاؤس قائم کیا گیا ہے اسی طرح تاریخ میں پہلی بار وزیر اعلیٰ پنجاب کے ویژن سے لائیو سٹاک اور ڈیری ڈویلپمنٹ میں جامع لائیو سٹاک پالیسی مرتب کی گئی ہے جس میں آئندہ سالوں کیلئے شعبے میں ترجیحات اور ضروریات کا تعین کیا گیاہے۔

مزید : کامرس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...