شکار سے روکنے پر سابق ایم پی اے کا وائلڈ لائف انسپکٹر ‘ اہلکاروں پر تشدد

شکار سے روکنے پر سابق ایم پی اے کا وائلڈ لائف انسپکٹر ‘ اہلکاروں پر تشدد

رحیم یارخان(ڈسٹرکٹ رپورٹر)سابق ممبر قومی اسمبلی کا بیٹوں اور ساتھیوں کے ہمراہ چولستانی علاقہ میں شکارکھیلنے سے منع کرنے کی رنجش پر وائلڈ لائف انسپکٹر اور اہلکاروں پر تشدد مرغا بنائے رکھا مووی بھی بناتے رہے موبائل فون اور نقدی چھین لی۔ تفصیل کے مطابق وائلڈ لائف انسپکٹر کلیم سرفراز نے (بقیہ نمبر16صفحہ7پر )

پولیس کو دی جانے والی اپنی شکایت میں بیان کیا کہ وہ اپنے عملہ کے ہمر اہ چک220 ون ایل چولستانی علاقہ میں ڈیوٹی پر موجود تھا کہ اسی دوران سابق ممبر قومی اسمبلی میجر (ر) تنویر حسین سید اپنے بیٹوں حسین تنویر، علی حیدر اور15کس نامعلوم افراد کے ہمراہ کھلی جیپوں پر سوارہوکر آئے اور اس کے عملہ، ملازمین ، واچرعبدالرزاق اور ڈرائیور کو اسلحہ کی نوک پر ہینڈ زپ کرتے ہوئے کان پکڑوادیئے اور اسے زبردستی جیپ میں ڈال کر سائیڈ ایریا میں لے جاکر ڈنڈوں اور تھپڑوں سے ت شدد کانشانہ بنانے کے ساتھ ساتھ اس کے کپڑے اتروا کر مووی بناتے رہے اسی دوران ملزمان نے اسے دھمکی دی کہ آئندہ شکار کھیلنے سے روکنے کی کوشش کی تو اس سے بھی برا حال کیا جائے گا اور اس سمیت موجود اہلکاروں کے پاس موبائل فون ،7500 روپے کی نقدی چھین کر موقع سے فرارہوگئے بعدازاں پولیس نے وائلڈ لائف انسپکٹر کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی۔

مزید : ملتان صفحہ آخر

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...