درندہ صفت باپ کی اپنی بیٹی کے ساتھ زیادتی عدالت میں ایسی وجہ بتادی کہ کوئی بھی سر پکڑ کر بیٹھ جائے

درندہ صفت باپ کی اپنی بیٹی کے ساتھ زیادتی عدالت میں ایسی وجہ بتادی کہ کوئی ...

لندن (مانیٹرنگ ڈیسک)برطانیہ میں ایک درندہ صفت باپ نے اپنی حقیقی بیٹی کو ہوس کی بھینٹ چڑھا دیا اور عدالت میں ایسا اپنی بد خصلتی کا ایسا جواز پیش کر دیا کہ جج بھی حیران رہ گیا۔ news.com.auکی رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ برطانوی شہر کووینٹری میں پیش آیا جہاں 54سالہ باپ نے اپنی 16سالہ بیٹی سے جنسی زیادتی کی۔ ملزم کا کہنا تھا کہ اس کی بیٹی ہم جنس پرست تھی اور وہ اسے بتانا چاہتا تھا کہ مردوں سے جسمانی تعلق قائم کرنا زیادہ بہترہے۔

رپورٹ کے مطابق لڑکی کافی عرصے سے اپنی جنسی رغبت کے متعلق اپنے باپ کو بتانا چاہتی تھی لیکن وہ ڈرتی تھی۔ بالآخر اس نے ایک روز اپنے باپ کو بتادیا کہ وہ ہم جنس پرست ہے اور اسے مردوں میں کوئی دلچسپی نہیں۔ یہ بات سن کر باپ شدید غصے میں آگیا اور اسے سبق سکھانے کیلئے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ جس کے بعد لڑکی پولیس کو رپورٹ کرنے کی بجائے گھر چھوڑ کر بھاگ گئی اور یہ درندہ صفت انسان سزا سے بچ گیا۔

اس واقعے کے چند سال بعد اس شخص نے اپنی دوسری بیٹی کو 11سال کی عمر میں زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا، جس نے پولیس کو اطلاع دے دی ۔ لڑکی نے پولیس کو بتایا کہ اس کا باپ کئی سال سے اس کے ساتھ منہ کالا کرتا آ رہا تھا۔ پہلی بار اس نے اسے تب زیادتی کا نشانہ بنایا جب وہ صرف 11سال کی تھی۔ جب پولیس نے اسے گرفتار کرکے تفتیش کی تو اس کا پہلا جرم بھی سامنے آ گیا۔ اب عدالت کی طرف سے دونوں لڑکیوں کو زیادتی کا نشانہ بنانے کے جرم میں اسے 21سال قید کی سزا سنا دی گئی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...