2 لڑکوں کی آپس میں شادی ‘ ملزموں کی درخواست ضمانت پرسماعت آج تک ملتوی

2 لڑکوں کی آپس میں شادی ‘ ملزموں کی درخواست ضمانت پرسماعت آج تک ملتوی

  



ملتان (خبر نگار خصو صی )جوڈیشل مجسٹریٹ ملتان نے 2 لڑکوں کی آپس میں شادی اور غیر اخلاقی محفل کے مقدمہ میں ملوث ملزموں کی(بقیہ نمبر20صفحہ12پر )

درخواست ضمانت پر سماعت آج5 مارچ مارچ تک ملتوی کرنے کا حکم دیا ہے۔ فاضل عدالت میں ملزموں محمد مجاہد عرف پائل جان، خضر حیات، فیاض، محمد عدنان، محمد رمضان، ساغر عباس، غلام عباس، محمد ہاشم، احمد بخش، ساجد، محمد عمران، محمد عرفان عرف چاہت، محمد عرفان عرف پنکی جان، محمد اختر عرف گلابوں، محمد ناصر عرف شما جان، عرفان عرف بنٹی، عرفان عرف شیزا، مٹھو عرف راگنی، محمد سلیم عرف ثناء اور رشید احمد عرف سجنی نے درخواست ضمانت بعد از گرفتاری دائر کی تھی کہ پولیس تھانہ الپہ کے مطابق 2 مارچ کو پولیس کو اطلاع ملی کہ اڈہ بند بوسن کے قریب عامر ڈھلوں اور مجاہد عرف پائل جان آپس میں شادی کر رہے ہیں جہاں دعوت اور فحش رقص کا سلسلہ جاری ہے جہاں چھاپہ مارا تو 100/150 افراد موجود اور سٹیج پر خواجہ سراء فحش رقص کر رہے تھے جس پر درخواست گذار ملزموں کو گرفتار کیا گیا ہے جبکہ وہ بے گناہ ہیں اور مقدمہ بدنیتی سے غلط حقائق پر درج کیا گیا ہے اور ان پر صرف موقع پر موجودگی کا الزام عائد کیا گیا ہے اور الزامات ممنوعہ دفعات میں نہیں آتے ہیں اس لئے ضمانت منظور کرنے کا حکم دیا جائے۔ دریں اثناء خواجہ سرا اور مرد کی شادی کا معاملہ ۔چھاپہ مارنے والے پولیس ملازمین ایس ایس پی آپریشنز کو تسلی بخش جواب نہ دے پائے اور شواہد کو بھی پیش نہ کر سکے۔جسکی وجہ حالات مشکوک ہونے کی طرف چل پڑے ہیں۔حالانکہ پولیس ٹیم نے شواہد کے نام پر چند ویڈیوز پیش کیں جنہیں ایس ایس پی نے مسترد کر دیا۔ویڈیوز کو بطور ثبوت پیش کرنے پر ایس ایس پی نے ریڈ ٹیم کی سرزنش کر ڈالی۔اور انہوں نے خواجہ سراوں کو مکمل انصاف کی یقین دہانی.جبکہ ایس ایس پی آپریشنز نے خواجہ سراوں سے مزید تفتیش کے لیے ایک دن کا وقت مانگ لیا۔

ملتوی

مزید : ملتان صفحہ آخر