آشیانہ سکینڈل، گواہوں کے بیانات کی نقول فراہم نہ کرنے پر نیب کو نوٹس

آشیانہ سکینڈل، گواہوں کے بیانات کی نقول فراہم نہ کرنے پر نیب کو نوٹس

  



لاہور(نامہ نگارخصوصی) لاہور ہائی کورٹ کے جسٹس ملک شہزاداحمد خان اور مسٹر جسٹس مرزاوقاص رؤف پر مشتمل ڈویژن بنچ نے سابق ڈی جی ایل ڈی اے احد خان چیمہ کے آشیانہ اقبال ہاؤسنگ سکیم سکینڈل میں گواہوں کے بیانات کی نقول فراہم نہ کرنے کے خلاف دائردرخواست پر نیب کو نوٹس جاری کرتے ہوئے 14 مارچ کو جواب طلب کر لیاہے،عدالت نے احتساب عدالت لاہور سے بھی جواب طلب کیاہے۔فاضل بنچ نے احد خان چیمہ کی جانب سے عدالت کے فیصلے کے خلاف دائر درخواست پر سماعت کی،دو رکنی بنچ نے درخواست گزار کے وکیل امجد پرویز کی اس استدعا کو مسترد کر دیا کہ دستاویزات کو ریکارڈ کا حصہ بنانے تک ٹرائل کورٹ میں سماعت روک دی جائے ،درخواست گزار کا موقف ہے کہ نیب نے میرے خلاف رشتہ داروں کے بیانات بطور گواہ قلمبند کئے ہیں،ٹرائل کورٹ میں نیب گواہوں کے بیانات کی نقول جمع نہیں کروا رہا، احتساب عدالت نے گواہوں کے بیانات کی نقول فراہم کرنے کی درخواست بلاجواز ہی خارج کر دی ہے، احتساب عدالت کا حکم کالعدم کر کے گواہوں کے بیانات کی نقول فراہم کرنے کا حکم دیا جائے۔

آشیانہ سکینڈل

مزید : صفحہ آخر


loading...