سپریم کورٹ میں خواتین کوہراساں کرنے سے متعلق قوانین کی تشریح کے معاملے پرسماعت

سپریم کورٹ میں خواتین کوہراساں کرنے سے متعلق قوانین کی تشریح کے معاملے ...
سپریم کورٹ میں خواتین کوہراساں کرنے سے متعلق قوانین کی تشریح کے معاملے پرسماعت

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سپریم کورٹ آف پاکستان میں خواتین کو ہراساں کرنے سے متعلق قوانین کی تشریح کے معاملے پرسماعت ہوئی،جسٹس عظمت سعید شیخ کی سربراہی میں 3 رکنی بنچ نے سماعت کی ۔گزشتہ سماعت پرعدالت نے وفاقی وصوبائی حکومتوں سے جواب مانگاتھا ۔وفاقی محتسب کشمالہ برائے انسداد ہراسیت کشمالہ طارق بھی پیش ہوئیں۔

دوران سماعت کشمالہ طارق نے کہا کہ سب سے بڑامسئلہ عدالتوں کے حکم امتناع ہیں۔جسٹس مشیر عالم نے کہا کہ اٹھارویں ترمیم پاس کرنے میں توآپ بھی شامل تھیں،اٹھارویں ترمیم میں فیئرٹرائل کاحق دیا گیا۔

کشمالہ طارق نے کہا کہ میں نے اٹھارویں ترمیم کے حق میں ووٹ نہیں ڈالا،عدالت سے استدعا ہے کہ خواتین کے قومی دن 8 مارچ سے پہلے فیصلہ کردیں۔جسٹس عظمت سعید نے کہاکہ سب سے اہم معاملہ دائرہ اختیارکا تعین ہے۔

عدالت نے کہا کہ آئندہ سماعت پربحث کے بعداسی دن سن کرفیصلہ کریں گے،صوبوں نے بھی ابھی تک جواب جمع نہیں کرایا۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد


loading...