عرب لیگ اور ترکی آمنے سامنے ، وجہ کیا بنی؟ امت مسلمہ کیلئے تشویشناک خبر آگئی

عرب لیگ اور ترکی آمنے سامنے ، وجہ کیا بنی؟ امت مسلمہ کیلئے تشویشناک خبر آگئی
عرب لیگ اور ترکی آمنے سامنے ، وجہ کیا بنی؟ امت مسلمہ کیلئے تشویشناک خبر آگئی

  

انقرہ(ڈیلی پاکستان آن لائن )ترکی کی وزارت خارجہ نے  عرب لیگ کے وزرائے خارجہ کونسل کے اجلاس میں ترکی کے خلاف کیے گئے فیصلوں کو مکمل طور پر مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ ان فیصلوں میں عرب عوام کی نمائندگی نہیں کی گئی۔

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق ترکی کی وزارت خارجہ کی جانب سے کہا گیا ہے کہ عرب لیگ کے اراکین جانتے ہیں کہ  کچھ اپنی  سرگرمیوں کو چھپانے کے لئے ترکی پر الزام  لگارہے ہیں جس کی کوئی اہمیت نہیں ہے۔ترکی نے عرب لیگ کے فیصلے پر اعتراض کرنے والے ممالک کا بھی حوالہ دیا ہے  اور کہا ہے کہ کونسل نے اعتراضات کے باوجود شفاف مذاکرات کے عمل کے بغیر مختلف ممالک کے بیانیہ کو جگہ دی ہے۔

 ترکی ، دنیا اور خطے میں اپنے اصولی اور مستحکم مؤقف، سلامتی ، امن اور استحکام کی بحالی کے لئے سب سے زیادہ کوششیں کرنے والے ممالک میں سر فہرست ہے۔ ترکی خطے میں عرب ممالک کی خودمختاری کے تحفظ اور علاقائی سالمیت کو ہمیشہ ہی ترجیح دیتا چلا آیا ہے۔

واضح رہے کہ 3 مارچ کو ہونے والے عرب لیگ کے اجلا س میں  ترکی کی مختلف عرب ممالک میں فوجی مداخلت کو یکسر مسترد کیا گیا تھا۔

مزید :

بین الاقوامی -