این اے 125کے فیصلے میں قانونی سقم موجود ہیں ،(ن) لیگ لائرز فورم

این اے 125کے فیصلے میں قانونی سقم موجود ہیں ،(ن) لیگ لائرز فورم

لاہور(فورم رپورٹ:محمد نواز سنگرا//تصاویر :علی رضا)الیکشن ٹریبونل کے این اے 125کے فیصلے میں قانونی سقم موجود ہیں جو سپریم کورٹ میں واضح ہو جائیں گے اور ٹریبونل کا فیصلہ تادیر نہیں ہے۔پرائزئڈنگ آفیسر کی غلطی کی سزا جیتنے والے امیداوار کو نہیں دی جاسکتی۔ٹریبونل کا فیصلہ جوڈیشل کمیشن پر اثر انداز نہیں ہو گا۔چین کا پاکستانی قیادت پر اعتماد اور کنٹونمنٹ بورڈانتخابات میں مسلم لیگ(ن)کی کامیابی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ(ن)لائرز فورم نے ’’پاکستان ‘‘فورم میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا۔صدر مسلم لیگ(ن)لائرز فورم اشتیاق چودھری نے کہا کہ این اے 125میں ٹریبونل کے فیصلے میں قانونی سقم رہ گئے ہیں ۔ٹریبونل کا فیصلہ اپنی طرز کا عجیب فیصلہ ہے۔256میں صرف 17پولنگ سٹیشنوں کا ریکارڈ چیک کیا گیا ہے۔گنتی میں ووٹ خواجہ سعد رفیق کے زیادہ تھے ۔این اے 125میں مسلم لیگ (ن)عوامی مینڈیٹ سے آئی ہے جس کی تائید کنٹونمنٹ بورڈ کے انتخابات میں ہو گئی ہے۔کنٹونمنٹ بورٖڈ کے انتخابات نہایت شفاف تھے مسلم لیگ (ن)نے لاہور کے 20میں سے15حلقوں میں کامیابی اور راولپنڈی جہاں عمران خان اور شیخ رشید نمائندگی کر رہے تھے وہاں 20میں سے 19حلقوں میں کامیابی حکومتی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے۔مسلم لیگ(ن)ملک کی منجھی ہوئی سیاسی جماعت ہے جو گھبرانے والی نہیں دوبارہ الیکشن کرا دیئے جائیں توبھی پی ٹی آئی این اے125میں کامیاب نہیں ہو سکتی۔سیکرٹری جنرل زاہد حسین ملک نے کہا کہ این اے125میں پریزائڈنگ آفیسر کی غلطی کیوجہ سے جیتے ہوئے امید وار کونااہل قرار نہیں دیا جا سکتا۔ٹریبونل کا فیصلہ سپریم کورٹ میں کالعدم قرار دیا جا سکتاہے۔ٹریبونل کا فیصلہ جوڈیشل کمیشن پر اثر انداز نہیں ہو گاابھی تک جوڈیشل کمیشن میں ایک بھی منظم دھاندلی کا ثبوت نہیں لایا گیا۔پاکستان کی تاریخ میں کوئی بھی الیکشن 100فیصد شفاف نہیں ہوا۔سنئیر نائب صدر معظم خان نے کہا کہ چین کا مسلم لیگ(ن)کی قیادت پر انحصارملک و قوم کیلئے خوش آئند ہے چین دیکھ رہا تھا کہ پاکستان میں کوئی ایسی قیادت آئے جس پر اعتماد کر کے سرمایہ کاری کی جائے۔نائب صدر احسن نوید فاروقی نے کہا کہ ایک شخص کی ہٹ دھرمی اور تخریبی سیاست کیوجہ سے ملک اقتصادی محرمیوں کا شکار ہوا ۔تحریک انصاف نے پیپلز پارٹی کو سائیڈ پر کر دیا اور ملکی دوسری بڑی جماعت بننے جا رہی ہے لیکن ان کو تعمیر ی سیاست پر دھیان دینا چاہیے۔نائب صدر تحسین زہرہ کاظمی نے کہا کہ مسلم لیگ(ن)خواتین کیلئے قابل تحسین کا م کر رہی ہے اور عورتوں کو مختلف شعبہ زندگی میں پرموٹ کر رہی ہے ۔مسلم لیگ(ن)ملک کی ہردل عزیز جماعت ہے ایک فیصلے سے جماعت کی مقبولیت کم نہیں ہوگی۔ایگزیکٹو ممبر ادریس چوہان نے کہا کہ لاہور اور راوالپنڈی کے پوش علاقوں میں مسلم لیگ(ن)کی کنٹونمنٹ علاقوں میں کامیابی سے واضح ہو گیا کہ تحریک انصاف کے دعوے جھوٹے ہیں ملک کے نوجوان اور پوش علاقوں کے لوگ مسلم لیگ(ن)کے ساتھ ہیں ۔ (ن) لیگ لائرز فورم

مزید : صفحہ آخر


loading...