ہائیکورٹ کا پنجاب حکومت کو پنشن ادائیگی کا دوبارہ نیا شیڈول جمع کرانے کا حکم

ہائیکورٹ کا پنجاب حکومت کو پنشن ادائیگی کا دوبارہ نیا شیڈول جمع کرانے کا حکم

لاہور (نامہ نگار خصوصی) لاہور ہائیکورٹ نے بزرگ پنشنرز کو فل پنشن کے بقایاجات کی 10 برس میں ادائیگیوں کاپنجاب حکومت کی طرف سے پیش کیا گیا شیڈول ایک مرتبہ پھرمسترد کرتے ہوئے نیا شیڈول 11جون تک جمع کرانے کا حکم دے دیا، عدالت نے فل پنشن میں اضافہ یکم جولائی سے نافذ کرنے کا حکم بھی دیا ہے۔ مسٹر جسٹس سید منصور علی شاہ نے بزرگ پنشنرز کی فل پنشن کی رقم کی عدم ادائیگی کے خلاف درخواستوں پر سماعت کی، سیکرٹری خزانہ نے عدالت کو بتایا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق بزرگ پنشنرز کو فل پنشن کی ادائیگی یکم جولائی سے شروع کر دی جائے گی تا ہم پنشن کے بقایا جات کی رقم 35ارب روپے ہے جوکہ فنڈز کی کمی کے باعث فوری ادا نہیں کی جا سکتی ،پنشن کے بقایاجات کی رقم 10سال میں ساڑھے 3 ارب روپے سالانہ کے حساب سے ایک لاکھ 76 ہزار بزرگ پنشنرز کو ادا کی جائے گی، بزرگ پنشنرز اور ان کے وکلاء نے حکومتی شیڈول مسترد کرتے ہوئے کہا کہ بقایا جات کی رقم کے لئے پہلے ہی عدالتوں کے دھکے کھا رہے ہیں جس پر عدالت نے بزرگ پنشنرز کو سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق یکم جولائی سے فل پنشن ادا کرنے کا حکم دیتے ہوئے بقایاجات کی رقم ادا کرنے کے لئے دوبارہ ترمیمی شیڈول پیش کرنے کا حکم دے دیا۔عدالت اس سے قبل بھی متعدد بار حکومت کی طرف سے پیش کیا جانے والا ادائیگیوں کا شیڈول مسترد کرچکی ہے ۔ بزرگ پنشنرز

مزید : صفحہ آخر


loading...