ذوالفقار مرزا کی جان کو خطرہ، سندھ پولیس مکمل سیاسی ہو چکی ہے، چیف جسٹس اور وفاقی حکومت نوٹس لیں: فہمیدہ مرزا

ذوالفقار مرزا کی جان کو خطرہ، سندھ پولیس مکمل سیاسی ہو چکی ہے، چیف جسٹس اور ...
ذوالفقار مرزا کی جان کو خطرہ، سندھ پولیس مکمل سیاسی ہو چکی ہے، چیف جسٹس اور وفاقی حکومت نوٹس لیں: فہمیدہ مرزا

  


کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے کہا ہے کہ ان کے شوہر ذوالفقار مرزا کی جان کو خطرہ ہے ، انہیں گھر سے نکلنے کی اجازت نہیں دی جا رہی، سندھ بھر کی پولیس کو بدین میں تعینات کر دیا گیا ہے،بدین میں ورکروں کے گھروں پر چھاپے مار کر انہیں غیر قانونی طریقے سے گرفتار کیا جا رہا ہے اور ان کے خلاف دہشت گردی کے مقدمات بنائے جا رہے ہیں۔کراچی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے فہمیدہ مرزا نے کہا کہ بدین میں پولیس ایک خاص گروپ کو ہراساں کر رہی ہے، غریبوں اور ہاریوں کے گھروں پر چھاپوں اور عدالتی احکامات کے باوجود مقدمات بنانے کی مذمت کرتی ہوں۔ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے کہا کہ سندھ کی پولیس مکمل طور پرسیاسی ہو چکی ہے، کوئی اس بات کا نوٹس کیوں نہیں لے رہا۔آئی جی سندھ کو متعدد درخواستیں لکھ چکی ہوں لیکن انہوں نے بھی کوئی نوٹس نہیں لیا۔ کیوں نہیں بتایا جاتا کہ ورکرز کے گھروں پر چھاپے مارنے والے سادہ کپڑوں میں ملبوس یہ لوگ کون ہیں؟سندھ کے وکلاءکو ذوالفقار مرزا کے کیس لڑنے سے روکا جا رہا ہے۔فارم ہاﺅس کے باہر کرفیو کا سماں ہے اور اندر کھانے پینے کی اشیاءبھی نہیں جانے دی جا رہیں۔انہوں نے چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ کیا کہ سندھ پولیس کے سیاسی ہونے کا نوٹس لیں۔چیف سیکرٹری وفاق کا نمائندہ ہوتا ہے، وفاق سے مطالبہ کرتی ہوں کہ کوئی مضبوط نمائندہ بھیجے جو صوبائی انتظامیہ کے ناجائز مطالبات کے سامنے سر نہ جھکائے۔

مزید : قومی /اہم خبریں


loading...