سٹاک مارکیٹ میں مندی، 100انڈیکس میں 195پوائنٹس کمی، ڈالر 87پیسے سستا

  سٹاک مارکیٹ میں مندی، 100انڈیکس میں 195پوائنٹس کمی، ڈالر 87پیسے سستا

  

کراچی (اکنامک رپورٹر) پاکستان اسٹاک مارکیٹ میں تین روزہ تعطیل کے بعد کاروباری ہفتے کے آغاز پر پیر کو مندی کا رجحان غالب رہاجس کے باعث کے ایس ای100انڈیکس کی34ہزار کی نفسیاتی حد گرگئی اور انڈیکس195پوائنٹس کی کمی سے 33916.64 پوائنٹس کی سطح پر آ گیاجب کہ حصص فروخت دباوٗ کے سبب 50.42فیصد کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی ریکارڈکی گئی جس کے نتیجے میں سرمایہ کاروں کو 4ارب 61کروڑ9لاکھ روپے کا خسارہ اٹھانا پڑا اور کاروباری حجم بھی گزشتہ ٹریڈنگ سیشن کی نسبت25.83فیصد کم رہا۔پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں یکم مئی اور دوروزہ ہفتہ وار تعطیل کے بعد پیر کو ٹریڈنگ کا اغاز ہوا تو شروع سے ہی سرمایہ کاروں کی جانب سے محتاط طرز عمل اپنایا گیا اور ابتدائی اوقات میں انڈیکس تقریباً50پوائنٹس بڑھ گیا لیکن بعد ازاں سرمایہ کاروں نے طویل المیعاد سرمایہ کاری کے بجائے وقتی حکمت عملی کے تحت منافع کے حصول کی عرض سے حصص فروخت کرنے شروع کردئے جس کے نتیجے میں مارکیٹ مندی کی لپیٹ میں آگئی اور دوران ٹریڈنگ کے ایس ای100انڈیکس 34ہزارکی نفسیاتی حد سے گرتے ہوئے 33715پوائنٹس کی نچلی سطح پر آگیا بعد میں ریکوری بھی آئی لیکن مجموعی طور پر مندی غالب رہی اور مارکیٹ کے اختتام پرکے ایس ای100انڈیکس195پوائنٹس کی کمی سے33916.64پوائنٹس ہوگیا اسی طرح125.53پوائنٹس کی کمی سے کے ایس ای30انڈیکس14956.29پوائنٹس اور کے ایس ای آل شیئر انڈیکس 17.31پوائنٹس کی کمی سے23920.30پوائنٹس پر بند ہوا۔گزشتہ روز مجموعی طور پر353کمپنیوں کے حصص کا کاروبار ہوا جن میں سے155کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں اضافہ ہوا جب کہ 178کمپنیوں کے حصص کی قیمتوں میں کمی اور20میں استحکام رہا۔مندی کے باعث مارکیٹ کی سرمایہ کاری مالیت 4ارب61کروڑ9لاکھ روپے کی کمی سے 63کھرب 72ارب 10کروڑ63لاکھ روپے ہوگئی۔پیر کو21کروڑ66لاکھ 19ہزار شیئرز کا کاروبار ہوا جوجمعرات کی نسبت7 کروڑ54لاکھ 67ہزار شیئرز کم ہے۔قیمتوں میں اتار چڑھاو ٗ کے لحاظ سے یونی لیور فوڈز کے حصص کی قیمت650روپے کے اضافے سے9850روپے اورکولگیٹ پامولو کے حصص کی قیمت162.05وپے کے اضافے سے 2322.80روپے ہوگئی جب کہ مری پٹرولیم کے حصص کی قیمت44.95روپے کی کمی سے1124.95روپے اوراٹلس ہنڈا کے حصص کی قیمت22روپے کی کمی سے 350روپے ہوگئی۔نمایاں کاروباری سرگرمیوں کے لحاظ سے میپل لیف،ہیسکول پٹرول،یونٹی فوڈز،ٹی آر جی پاکستان،کے الیکٹرک،پاک ا لیکٹران،پاک پٹرولیم،آئل اینڈ گیس ڈیولپمنٹ،پایونیئر سیمنٹ اور سمٹ بینک کے حصص سرفہرست رہے۔مقامی کرنسی مارکیٹ میں پیر کو بھی امریکی ڈالر کی قدر میں کمی آنے کا سلسلہ برقرار رہا اور انٹر بینک میں ڈالر 87پیسے کی کمی سے 159.63روپے جب کہ اوپن مارکیٹ میں ایک روپے کی کمی سے159.50روپے کی سطح پر آگیا۔دیگر کرنسیوں میں یورو کی قدر مستحکم رہی جب کہ برطانوی پاونڈ اور سعودی ریال کی قدر میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔فاریکس ایسوسی ایشن آف پاکستان کے مطابق گزشتہ روز انٹر بینک میں روپے کے مقابلے ڈالر کی قیمت خرید57پیسے کی کمی سے160روپے سے گھٹ کر159.43روپے اور قیمت فروخت87پیسے کی کمی سے160.50روپے سے گھٹ کر159.63روپے ہوگئی جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں روپے کے مقابلے ڈالر قیمت خرید ایک روپے کی کمی سے159.50روپے سے گھٹ کر158.50روپے اور قیمت فروخت 160.50روپے سے گھٹ کر159.50روپے ہوگئی۔دیگر کرنسیوں میں یورو کی قیمت خرید172روپے اور قیمت فروخت174روپے مستحکم رہی جب کہ برطانوی پاونڈ کی قیمت خرید195روپے سے بڑھ کر196روپے اور قیمت فروخت197روپے سے بڑھ کر198روپے ہوگئی۔فاریکس رپورٹ کے مطابق سعودی ریال کی قیمت خرید41.20روپے سے گھٹ کر40.70روپے اور قیمت فروخت41.60روپے سے گھٹ کر41.20روپے ہوگئی جب کہ یوے ای درہم کی قیمت خرید42.50روپے سے گھٹ کر42روپے اور قیمت ٖفروخت43روپے سے گھٹ کر 42.50روپے ہوگئی۔

سٹاک مارکیٹ

مزید :

صفحہ آخر -