فائر فائٹرز کا عالمی دن‘ ملتان میں فلیگ مارچ اورریلی

فائر فائٹرز کا عالمی دن‘ ملتان میں فلیگ مارچ اورریلی

  

ملتان (نیوز رپورٹر) 4مئی بین الاقوامی طور پر فائر فائٹر ڈے کے طور پر منایا جاتا ہے ڈائریکٹر جنرل پنجاب ایمرجنسی سروس ریسکیو 1122ڈاکٹر رضوان نصیر(ستارہ امتیاز) کی ہدایت پر ملتان میں فائر فائٹرز کے عالمی دن کے موقع پر فیلگ مارچ اور ریلی کا انعقاد کیا گیا سنٹرل اسٹیشن ریسکیو1122 ملتان پر ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسر ڈاکٹر ناطق حیات غلزئی(بقیہ نمبر27صفحہ6پر)

نے تفصیل بتاتے ہو کہا کہ پاکستان میں بھی فائر فائٹر ڈے پورے جوش جذبے سے منایا جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ ریسکیو1122ملتان نے فائر فائٹر ڈے کے حوالے سے چوک کمہاراں والہ سے کلمہ چوک تک فلیگ مارچ کیا۔ جس میں فائر فائٹرز کی خدمات پر روشنی ڈالی جو اپنی زندگی خطرے میں ڈال کر لوگوں کی جان اور مال کی حفاظت کرتے ہیں گکھڑ پلازہ میں شہید ہونے والے فائر فائٹر کو خراج تحسین پیش کیا۔ اِس موقع پر انچارج آپریشنل اینڈ ایڈمن ڈاکٹر کلیم اللہ، ایمر جنسی آفیسر ڈاکٹرخالد محمود اور ریسکیو اینڈ سیفٹی آفیسر محمد ارشد خان موجود تھیانچارج آپریشن اینڈایڈمن ڈاکٹر کلیم اللہ نے کہا کہ فائر فائٹر ڈے منانے کا مقصد فائر فائٹرزکی قربانیوں کو خراج تحسین پیش کر نا ہے فائر فائٹرز اپنی زندگیاں خطرے میں ڈال کر لوگوں کے جان ومال کا تحفظ کرتے ہیں فائر فائٹر ہمارے ماتھے کا جھومر ہیں انکی بدولت لوگو ں میں احساس تحفظ پیدا ہواہے کرونا احتیاطی تدابیر کے پیش نظر ہم نے آج فائر فائٹر ڈے کو صرف فلیگ مارچ تک ہی محدود رکھا ہے انہوں نے مزیدکہا کہ گذشتہ سال ریسکیو1122ملتان نے 843آگ لگنے کے واقعات میں آگ بجھائی جبکہ تحصیل شجاع آباد میں 46 مقامات پر آگ لگی جس پر 1122نے موقع پر پہنچ کر آگ پر قابو پایا اِن آگ لگنے کے حادثات میں 53لوگ ایسے تھے جو آگ لگنے میں جھلس گئے آگ لگنے کی بڑی وجہ لاپرواہی رہی۔889آگ لگنے کے واقعات میں 207کی وجہ لاپرواہی تھی اِس لیئے آگ لگنے کے واقعا ت میں کمی لانے کیلئے لازمی ہے ہر فرد احساس ذمہ داری کے ساتھ جاری کردہ حفاظتی اقداما ت اور احتیاطی تدابیر پر عمل کرے تاکہ آگ لگنے کے واقعات میں کمی لائی جاسکے۔ڈسٹرکٹ ایمرجنسی آفیسرریسکیو1122ملتان ڈاکٹر ناطق حیات غلزئی نے کہا کہ فائر فائٹر اپنی جانوں کی بازی لگا کر لوگوں کی مال وجان کی حفاظت کرتے ہیں اْن کو خراج تحسین پیش کرنے کا بہترین طریقہ یہ ہے کہ ہم آتشزدگی کے واقعات نہ ہونے دیں اور مندرجہ ذیل حفاظتی اقداما ت اور احتیاطی تدابیر پر عمل پیرا ہوں تاکہ آگ لگنے کے حادثات میں کمی لائی جاسکے۔ادھر ریسکیو 1122 نے گزشتہ 24گھنٹوں میں 143 ایمرجنسیز میں 138 لوگوں کو ریسکیو کیا ان ایمرجنسیز میں ملتان شہر میں 140 جبکہ شجاع آباد میں 03 ایمرجنسی اٹینڈ کی گئی-جن میں ٹریفک حادثات کی تعداد 32 ہے 31 حادثات ملتان میں جبکہ 01 حادثہ شجاع آباد میں پیش آیے ان حادثات میں مجموعی طور پر 31 لوگوں کوریسکیور کیا گیا جن میں سے 23 کو موقع پر طبی امداد دی گئی اور 08 مریضوں کو نشتر ہسپتال اور دوسرے ہسپتالوں میں شفٹ کیا گیا ہے۔

فائر فائٹرز

مزید :

ملتان صفحہ آخر -