سنٹرل پولیس آفس میں اسسٹنٹ سب انسپکٹرز کورینک لگانے کی تقریب

سنٹرل پولیس آفس میں اسسٹنٹ سب انسپکٹرز کورینک لگانے کی تقریب

  

لاہور(کر ائم رپو رٹر)سی سی پی او آفس میں ہیڈ کانسٹیبل سے اے ایس آئیز رینک لگانے کی تقریب ہوئی۔ تقریب میں ترقی پانے والے اہلکاروں کو سی سی پی او ذوالفقار حمید اور ایس ایس پی کیپٹن(ر)لیاقت علی ملک نے ترقی پانے والے اہلکاروں کو رینک لگائے۔ سی سی پی او لاہور نے گزشتہ روز ہیڈ کانسٹیبلز سے اے ایس آئیز پر 400 اہلکاروں کو پروموٹ کیا تھا۔

 اس موقع پر سی سی پی او ذوالفقار حمید کا کہنا تھا کہ بروقت اور میرٹ پر ترقی ملنا تمام اہلکاروں کا حق ہے۔ ترقی پانے والے تمام افسران مزید محنت اور لگن سے فرائض سرانجام دیں۔ ایس ایس پی کیپٹن (ر) لیاقت علی ملک کا کہنا تھا محکمانہ ترقی کا عمل تیز ہونے سے محکمہ میں مثبت تبدیلیاں آئیں گی۔ محکمہ پولیس میں ترقیوں کا عمل جاری رہے گا۔ایس ایس پی ایڈمن کی دیگر اہلکاروں کو جلد ازجلد اے سی آرز مکمل کرنے کی ہدایت کی ان کا کہنا تھا کہ اے سی آرز مکمل ہونے پر مزید اہلکاروں کو ترقیاں دی جائیں گیں۔ رینک پانے والوں میں محمد علی حمزہ، شاہد جاوید، شہزاد احمد، محمد عمران، محمد ارشد، انیس شامل تھے۔

 پمز ہسپتال گا نئی وارڈ میں لیڈی ڈاکٹر کا کو رو نا ٹیسٹ مثبت انتظامیہ میں ہلچل   اسلام آباد(آن لائن)پاکستان انسٹیٹوٹ آف میڈیکل سائنسز (پمز) میں کورونا وائرس تیزی سے پھیلنے لگا۔ ہسپتال کی گائنی وارڈ میں لیڈی ڈاکٹرکا کروناٹیسٹ مثبت آنے کے بعد درجنوں ڈاکٹرز میں وائرس کے خدشات پیدا ہو چکے ہیں، انتظامیہ میں ہلچل مچ گئی ۔ تفصیلات کے مطابق پمز ہسپتال جہاں پر انتظامیہ کی طرف سے حفاظتی انتظامات نہ ہونے کی وجہ سے کرونا وائرس شدت اختیار کر چکا ہے، گزشتہ روز گائنی ہسپتال کی ایک لیڈی ڈاکٹر کو بخار ہوا جس کا کرونا ٹیسٹ کیا گیا اور ٹیسٹ مثبت آنے کے بعد گائنی کی میل جول  رکھنے والی ڈاکٹرز نرسز اور میڈیکل سٹاف میں کورونا وائرس کا خدشہ پیدا ہو گیا

 اس ضمن میں پمز کے 15 ملازمین کا گزشتہ روز کرونا ٹیسٹ کیا گیا جس کی رپورٹ آنا باقی ہے۔ ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن (وائی ای او) نے کرونا وائرس کے پھیلاؤ کا ذمہ دار پمز کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر کو قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ پمز عملے کو بروقت حفاظتی کٹس نہ دینا انسانیت سوز ظلم ہے۔ ایسوسی ایشن نے میڈیا کو بتایا کہ ہم ایک ماہ سے چیخ رہے ہیں کہ ہمارے پاس کرونا سے بچاؤ کے کوئی انتظامات نہیں لیکن  انتظامیہ میں کوئی ٹس سے مس نہیں ہوا۔ ینگ ڈاکٹر ایسوسی ایشن(وائی ای او) نے وزارت صحت سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ پمز میں حفاظتی اقدامات فوری طور پر شروع کریں۔

پمز ہسپتال

مزید :

علاقائی -