جہانگیر ترین نے فرانزک رپورٹ آنے تک خاموشی اختیار کر لی لیکن پی ٹی آئی کے اندرونی حلقوں میں کیا چل رہاہے؟ ممکنہ کہانی سامنے آگئی

جہانگیر ترین نے فرانزک رپورٹ آنے تک خاموشی اختیار کر لی لیکن پی ٹی آئی کے ...
جہانگیر ترین نے فرانزک رپورٹ آنے تک خاموشی اختیار کر لی لیکن پی ٹی آئی کے اندرونی حلقوں میں کیا چل رہاہے؟ ممکنہ کہانی سامنے آگئی

  

اسلام آباد (ویب ڈیسک) شوگر اسکینڈل فرانزک رپورٹ میں تاخیر کے باوجود پاکستان تحریک انصاف کے اندرونی حلقوں میں غیر یقینی صورتحال کی فضاءبرقرار ہے جبکہ جہانگیر ترین نے فرانزک رپورٹ آنے تک خاموشی اختیار کر لی ہے۔

روزنامہ جنگ کے مطابق جنوبی پنجاب کی سیاست میں جہانگیر ترین کا گہرا اثر و رسوخ ہے ، اگر ان کے خلاف کارروائی کا فیصلہ ہوا تو اس سے پارلیمنٹ میں عددی طور پر تحریک انصاف کو کچھ نقصان پہنچ سکتا ہے۔ اس میں کوئی شک و شبہ کی گنجائش نہیں کہ حکومت سازی میں جہانگیر ترین کا اہم کردار ہے خصوصاً جنوبی پنجاب کے سیاسی گھرانوں اور چوہدری برادران سے ان کے قریبی تعلقات ہیں ، ایسے میں اگر جہانگیر ترین کے خلاف کارروائی کا فیصلہ ہوا تو حکومتی سطح پر پارٹی کو کسی حد تک نقصان پہنچ سکتا ہے۔

پارٹی میں بعض حلقوں کا یہ بھی موقف ہے کہ شوگر ایکسپورٹ پر سبسڈی دینا حکومت کا فیصلہ ہے ، جہانگیر ترین نے سبسڈی لے کر کوئی جرم نہیں کیا البتہ اگر سبسڈی لینے میں ان کا کوئی کردار یا دباﺅ ثابت ہوتا ہے تو ایسی صورت میں ان کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی ہونی چاہئے۔ واضح رہے کہ 25 اپریل کو شوگر اسکینڈل کی فرانزک رپورٹ ا?نا تھی تاہم اس میں دو سے تین ہفتوں کا مزید وقت لے لیا گیا تھا۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -