کرونا وار، نشتر ہسپتال میں مزید 5مریض جاں بحق: کئی نئے کیس رپورٹ 

کرونا وار، نشتر ہسپتال میں مزید 5مریض جاں بحق: کئی نئے کیس رپورٹ 

  

 ملتان، رحیم یارخان، بہاولپور، ہارون آباد، جلالپور(وقائع نگار، نیوز رپورٹر، بیور و رپورٹ، نامہ نگار) نشتر ہسپتال ملتان میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں مبتلا 05 مزید مریض جاں بحق،اموات کی مجموعی  تعداد 670 ہو گئی۔زیر علاج کورونا کے مریضوں کی  تعداد 106 ہو گئی،24 مریضوں کی حالت تشویشناک۔جبکہ شبہ میں 65 مریض زیر علاج ہے تفصیل کے مطابق  نشتر ہسپتال انتظامیہ کی (بقیہ نمبر26صفحہ6پر)

جانب سے جاری اعداد و شمار  کے مطابق  آئی سو لیشن وارڈز میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران ملتان کے 55 سالہ اسلم۔ 23 سالہ شہر بانو۔60 سالہ الفریدہ بی ں ی اور مظفر گڑھ کے 61 سالہ فدا حسین اور 85 سالہ غوث بخش  نے دم توڑ دیا،یوں یکم اپریل 2020  سے چار مئی 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 670 ہو گئی ہے،جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 106 ہو گئی ہے جن میں سے 66 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے جبکہ زیر علاج 24 مریضوں  کی حالت تشویشناک  ہے،جبکہ کورونا کے شبہ میں 65 مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار  ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 5 ہزار 742 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 214 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے، جبکہ رحیم یارخان میں  وائرلیس پل کی 21 سالہ عرفانہ بی بی چک 164 کی 70 سالہ رستی مائی اکبر روڈ کی 16 سالہ کلثوم بی بی جامعہ قادریہ روڈ کی 26 سالہ ڈاکٹر وجیہہ15 سالہ رضوانہ 20 سالہ زرمین زمان 22 سالہ خضر غوری 13 سالہ محمد عالیان 55 سالہ امیر زمان شیخ زید ہسپتال کا 25 سالہ ڈاکٹر دانیال صادق آباد کا 40 سالہ محمد نواز اور چک 47 کا 55 سالہ اصغر علی کو کورونا وائرس کے شبہ میں ورثا نے طبی امداد کیلئے شیخ زید ہسپتال منتقل کیا جہاں انتظامیہ نے تصدیق کیلئے سوائپ حاصل کرکے لیبارٹری روانہ کرتے ہوئے قرنطینہ سینٹر منتقل کر دیا۔کمشنر بہاول پور ڈویژن کیپٹن محمد ظفر اقبال نے افطار سے قبل اچانک شہر کی مصروف شاہراہوں پر کورونا سے تحفظ کے ایس او پیز پر عملدرآمد کا جائزہ لیا۔ انہوں نے بغیر ماسک پہنے گھومنے والے نوجوانوں کی سرزنش کی۔انہوں نے ”ماسک پہنو“ مہم کا جائزہ لینے کے لئے شہر کی مختلف مساجد کا بھی دورہ کیا اور حکومت کے مساجد کے لئے وضع کردہ کورونا ایس او پیز کا جائزہ لیا۔انہوں نے شہریوں سے اپیل کی کہ مساجد میں نماز کی ادائیگی کے دوران بھی ماسک پہنیں، دوسروں سے سماجی فاصلہ برقرار رکھیں اور گھر سے وضو کر کے آئیں۔کرونا وائرس کے باعث غریب و نادر افراد متاثر ہونے لگے عید قریب آتے ہی ضلعی انتظامیہ بھی حرکت میں آ جاتی ہے جس سے چھوٹے کاروباری افراد شدید پریشان ہیں ان خیالات کا اظہار سیاسی و سماجی شخصیت عمردراز عرف نومی بھائی نے کیا انہوں نے کہا کہ شہر کے مختلف مقامات اور چوراہوں پر چھوٹے کاروبار کرنے والے سینکڈوں افراد ہیں جو روزگار کر کے اپنے خاندان کا پیٹ پالتے ہیں لیکن جب سے عالمی وباء کروناوائرس نے اپنے پنجے گاڑھے ہیں تب سے بڑے کاروبار کے ساتھ چھوٹے کاروبار کرنے والے افراد بھی شدید متاثر ہوئے ہیں ڈپٹی کمشنر بہاولنگر شفقت اللہ مشتاق نے ہارون آباد کے گورنمنٹ ماڈل ہائی سکول کے پرائمری حصے میں قائم کورونا ویکسین سنٹر کا اچانک دورہ کیا جہاں پر انہوں نے تمام تر انتظامات کا جائزہ لیتے ہوئے سنٹر پر موجود عملہ سے ویکسین بارے معلومات لیں اور ریکارڈ کو بھی چیک کیا، اسسٹنٹ کمشنر ہارون آباد چودھری محمد طیب، ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ہارون آباد ڈاکٹر عامر رضا و دیگر بھی موجود تھے، اس موقع پر ڈپٹی کمشنر شفقت اللہ مشتاق کا کہنا تھا کہ شہری اپنی زندگیاں محفوظ بنانے کیلئے کورونا ایس او پیز پر سختی سے عمل کریں۔ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر جلالپور کے دفتر میں قائم کووڈ 19 ویکسی نیشن سنٹر میں رجسٹرڈ افراد کی ویکسی نیشن کا سلسلہ جاری ہے‘ ویکسی نیشن کے لیے صبح 10 بجے سے دوپہر 3 بجے تک اور رات کو ساڑھے 8 بجے سے ساڑھے 12 بجے تک کے اوقات مقرر کیے گئے ہیں‘  خواتین کی  ویکسی نیشن طبی عملے کی خاتون رکن کے ذریعے کی جاتی ہے‘  ویکسی نیشن عملے کے رکن حسنین شاہ کے مطابق تحصیل جلالپور کے 4948 افراد اب تک خود کو رجسٹرڈ کروا چکے ہیں جن میں سے 2312 ویکسی نیشن سے مستفید بھی ہو چکے ہیں‘ حالیہ دنوں میں 40 سال سے زائد عمر کے افراد کی ویکسی نیشن ہو رہی ہے 40 سال سے زائد عمر کے وہ افراد جنہوں نے اب تک خود کو رجسٹرڈ نہیں کروایا وہ اب بھی اپنا شناختی کارڈ نمبر موبائل فون میسج کے ذریعے  1166 پر بھیج کر خود کو رجسٹرڈ کروا سکتے ہیں۔گورنمنٹ شہبازشریف جنرل ہسپتال میں قائم ویکسی نیشن سنٹر میں بدانتظامی،عملہ کے ناروا رویہ و سہولیات کی کمی کی شکایات سامنے آئی ہیں،جس پر ویکسی نیشن کے لئے آنے والے افراد نے احتجاج کیا ہے اور ضلعی حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ اس کا نوٹس لیا جائے اور معاملات کو بہتر بنانے کے لئے اقدامات کئے جائیں،سنٹر میں ویکسی نیشن کے لئے لوگوں کی بڑی تعداد رجوع کررہی ہے،مگروہاں سماجی فاصلے کو برقرار رکھنے کے لئے کوئی خاص انتظام نہیں ہے،جبکہ ڈیوٹی پر موجود عملہ کا رویہ بھی لوگوں کے ساتھ مناسب نہیں،جس کی وجہ سے آئے روز تکرار کے مناظر دیکھنے میں آتے ہیں،گزشتہ روز بھی بعض خواتین نے سنٹر کے باہر تعینات اہلکار کے خلاف احتجاج کیا،ان کا کہنا تھا کہ سنٹر پر تعینات اہلکار منیراکبر کا خواتین سے سلوک انتہائی ناروا ہے،خواتین کو برابھلا کہنا اور انہیں دھکے دینا اور ویکسی نیشن سنٹرسے ہی نکال دینا اس کا معمول ہے،جس کی شکایات بھی متعلقہ حکام کو کی گئی،مگر اس کے خلاف کارروائی نہ ہوسکی،انہوں نے مطالبہ کیا کہ ان کے خلاف کارروائی کی جائے اور سنٹر سے ہٹایا جائے،دوسری جانب سنٹر میں سپرٹ،کاٹن سمیت دیگر ضروری سامان دستیاب نہیں ہے،طبی ماہرین کے مطابق ویکسی نیشن کا انجکشن لگنے کے بعد سپرٹ لگی کاٹن کے ساتھ انجکشن والی جگہ کی صفائی ضروری ہے،گزشتہ روز سینئر قانون دان طارق سعید بھی ویکسی نیشن کے لئے گئے،تو سپرٹ اورکاٹن نہیں تھی،اس پر انہوں نے ڈیوٹی نرس سے استفسار کیا،توان کا کہنا تھا کہ ان کو دی گئی ٹریننگ کے مطابق سپرٹ نہیں لگانی،مگر جب انہوں نے اصرار کیا اور انہیں بتایا کہ طبی ماہرین کے مطابق سپرٹ لگانا ضروری ہے  صوبے بھر کے سکولوں کو کورونا کے کیسز کی وجہ سے بند کردیاگیا تھا اب یہ بندش کورونا کیسز سے مشروط کردی گئی حکام کا کہنا ہے کہ  تعلیمی ادارے کھولنا کورونا کیسسز کی تعداد کم ہونے پر منحصر ہے،شہری کورونا ایس او پیز پرہر صورت عملدرآمد کریں۔ضلعی انتظامیہ کے کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی کرنے والوں کے خلاف کریک ڈان کے دوران گزشتہ روز 8افراد موقع پر گرفتار کیا گیا جبکہ 7 افراد کے خلاف مقدمہ درج کرایا گیا۔ضلعی انتظامیہ کے افسران نے شیرشاہ روڈ پر واقع ریسٹورنٹ باربی کیوٹونائٹ پر چھاپہ مارا اور ریسٹورنٹ کے منیجر سمیت عملے کے پانچ افراد کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرادیا۔حکومت کی جانب سے پابندی کے باوجود ریسٹورنٹ میں ڈنر پارٹی جاری تھی جس میں 70سے زائد افراد شریک تھے۔کاروائی اسسٹنٹ کمشنر سٹی خواجہ محمدعمیر محمود اور سیکرٹری آرٹی اے رانا محسن کی قیادت میں کی گئی۔ملتان شہر میں جم سمیت16 کاروباری مراکز کو سیل کیا گیا۔کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر ڈسٹرکٹ ٹرانسپورٹ اتھارٹی نے 10 بسوں کو تحویل میں لیا گیا اور ٹرانسپورٹ مالکان پر 30 ہزار روپے جرمانہ بھی عائد کیا گیا۔کورونا ایس او پیز کی خلاف ورزی پر مجموعی طور پر 1لاکھ 96ہزار روپے کے جرمانے عائد کئے گئے۔

کرونا

مزید :

ملتان صفحہ آخر -