نہریں بند، کاشتکاروں کی مشکلات میں اضافہ

نہریں بند، کاشتکاروں کی مشکلات میں اضافہ

  

 رحیم یار خان (بیورو رپورٹ) مختلف علاقوں کے کاشتکاروں نے میڈیا کو بتایا کہ ڈالس برانچ سے نکلنے والی نہروں میں پانی(بقیہ نمبر12صفحہ6پر)

 نہ ہونے کے برابر ہم اپنی فصلوں کو ٹوب ویل کے ذریعے پانی لگانے پر مجبور ہیں کاشتکاروں نے الزام لگاتے ہوئے بتایا کہ ایکسین اور ایس ڈی او نے سب انجینئر کی ملی بھگت سے پلوشاہ سیکشن اور رکن سیکشن میں خفیہ طور اپنے اپنے چٹی دلال رکھے ہوئے ہیں جو آئے روز بھاری رقم کی وصولی کا مطالبہ کرتے ہیں ایکسین مجاہد تنویر کو شکایت کرنے کے لئے فون کرتے ہیں مگر ایکسین صاحب فون اٹھانا پسند نہیں کرتے اور ایس ڈی او ناد علی آئے روز مختلف مطالبات منوانے کے لئے اپنے بندے بھیجتا ہے نہروں پانی نہ ہونے کے برابر ہے ہم پیسے کہاں سے دیں ڈپٹی کمشنر صاحب کو بھی کئی مرتبہ گذارشات کی مگر شنوائی نہ ہوئی لہذا کاشتکار ملک کی ریڑھ کی ہڈی ہیں اور ملکی معیشت کو برقرار رکھنے کے لئے ڈالس برانچ کی تمام نہروں میں پانی چھوڑا جائے نہیں تو احتجاجی مظاہرہ کریں گے۔

اضافہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -