ڈاکٹر کچکول کو معطل کرنا اورعہدے سے ہٹانا انتقامی کاروائی اور سازش کا نتیجہ قرار 

ڈاکٹر کچکول کو معطل کرنا اورعہدے سے ہٹانا انتقامی کاروائی اور سازش کا نتیجہ ...

  

شیرگڑھ (نا مہ نگار)ضلع مردان کے عوامی،سماجی حلقوں نے ڈی ایچ او مردان ڈاکٹر کچکول خان کو معطل کرنا اورعہدے سے ہٹانا انتقامی کاروائی اور سازش کا نتیجہ قرار دیا ہے اور وزیر اعلیٰ،صوبائی وزیر صحت اور صحت کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ صاف و شفاف انکوائری کرکے ان کو باعزت طور پر اپنے عہدے پر بحال کیا جائے انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر کچکول ایک محنتی،دیانتدار،با اخلاق اور فرض شناس ہیلتھ آفیسر ہے بہت تھوڑے عرصے میں انہوں نے ضلع مردان کے ہسپتالوں کی حالت زار بہتر بنایا اور عوام کو صحت کی سہولیات بہم پہنچانے کے لئے ہسپتالوں کے اچانک دورے شروع کئے  ڈیوٹی میں غفلت اور لاپر واہی برتنے والے عملے کو راہ راست پر لا کر ڈیوٹی کا پابند بنادیا سرکاری لیبارٹریوں کو ٹھیک کرکے عوام کو صحت کی سہولیات پہنچائی  جس پر بعض مافیا ان کے خلاف سازشیں کرنے لگی اور آخر کار اپنے مذموم مقاصد میں کامیاب ہوکر ڈاکٹر کچکول کو ناکردہ کی سزا دی گئی اور انہیں عہدے سے ہٹا کر معطل کر دیا جو ظلم اور نا انصافی ہے لہذا صوبائی حکومت انصاف کے تقاضے پورے کرکے صاف اور شفاف تحقیقات کے ذریعے انہیں با عزت طور پر بحال کیا جائے انہوں نے کہا کہ ڈاکٹر کچکول ایک بہترین ایڈ منسٹریٹر اور گولڈ میڈلسٹ ہے ضلع مردان میں کرونا جیسے تباہ کن وبا میں وہ ہمیشہ فرنٹ پر رہے اور محدود وسائل میں ملک بھر میں کرونا مریضوں میں زیادہ شرح رکھنے والا ضلعے کو لاک داون میں اپنی محنت،انتظامیہ کی کاوشوں اور عوام کے تعاون سے ایک ہفتہ کے اندر کم سطح پر لا کر ثابت کر دیا کہ وہ بہترین منتظم ہے ہونا تو یہ چاہئیے تھا کہ ضلع مردان میں ہیلتھ ایمر جنسی کرونا پر قابو پانے کے اعتراف میں انہیں انعام سے نوازا جاتا لیکن انہیں عہدے سے ہٹانا اور معطل کرنا سمجھ سے بالا تر ہے انہوں نے ضلع مردان کے تمام قومی اسمبلی اور صوبائی اسمبلی کے ممبران سے اپیل کی کہ وہ آگے آئے اور ایک فرض شناس اور دیاتندار ہیلتھ آفیسر کو انصاف دلانے میں اپنا کردار ادا کریں 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -