نیٹو سپلائی ہرصورت بند کریں گے چاہے وفاق سے بغاوت کرنی پڑے،محمودالرشید

نیٹو سپلائی ہرصورت بند کریں گے چاہے وفاق سے بغاوت کرنی پڑے،محمودالرشید

لاہور (سپیشل رپورٹر) اپوزیشن لیڈر میاں محمودالرشید نے ڈرون حملوں کے خلاف اور نیٹو سپلائی کی بندش کے مطالبے پر مبنی قرار داد منظور کرنے کے لئے پنجاب اسمبلی کا اجلاس فوری طلب کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ نیٹو سپلائی ہرصورت بند کریں گے چاہے وفاق سے بغاوت ہی کیوں نہ کرنی پڑے، حکومت کو متبہ کرتے ہیں کہ اگر اس نے اس مسئلے پر لیت ولعل سے کام لیا تو عوام اسے چلتا کردیں گے، اپوزیشن جماعتوں سے ہنگامی طورپر ملاقاتیں کررہے ہیں امید ہے کہ ہمارے موقف کی تائید کی جائے گی۔ وہ گزشتہ روز پنجاب اسمبلی کمیٹی روم میں اراکین پنجاب اسمبلی مراد راس اور ڈاکٹر نوشین حامد کے ہمراہ ہنگامی پریس کانفرنس سے خطاب کررہے تھے ۔ انہوں نے کہا کہ پنجاب اسمبلی میں ڈرون حملوں کے خلاف اور نیٹو سپلائی کی بندش کے مطالبے پر مبنی قرار داد جمع کرائی ہے اور وفاق سے مطالبہ کرتے ہیں اس مسئلے کو سلامتی کونسل میں لے کر جائے اور دیگرتمام آپشنز کو بھی زیر غور لایا جائے۔ اگر حکومت نے قرارداد کی منطوری کے لئے اجلاس نہ بلایا تو پھر عوامی احتجاج کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ ڈرون حملوں کی وجہ سے دہشت گردی میں کمی نہیں بلکہ بدامنی اور انتہا پسندی کو فروغ مل رہا ہے۔ ہم مطالبہ کرتے ہیں کہ قرارداد کی منظوری کے لئے فوری طورپر پنجاب اسمبلی کا اجلاس بلایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم کے حالیہ دورہ امریکہ کے بعد ڈرون حملوں میں زیادہ شدت آگئی۔ سوال اٹھ رہا ہے کہ امریکہ نے تو یقین دہائی کرائی تھی کہ کوئی ایسا کام نہیں کریں گے جس سے امن کا عمل متاثر ہو لیکن ڈرون حملہ کرکے مذاکرات کے تمام عمل کو سبوتاژ کردیا گیا ہے اور حکومتی کوششوں کو پارا پارا کردیا گیا۔

محمود الرشید

مزید : صفحہ آخر