سانگلا ہل، رشتے کی رنجش پر نوجوان نے فائرنگ کرکے سگے بہن بھائی کو قتل کر دیا

سانگلا ہل، رشتے کی رنجش پر نوجوان نے فائرنگ کرکے سگے بہن بھائی کو قتل کر دیا

  

سانگلا ہل(تحصیل رپورٹر ) نواحی چک نمبر121ہنجلی میں معمولی رنجش پر نوجوان طاہر عمران نے نماز فجر کے بعد فائرنگ کر کے اپنے حقیقی بھائی ہارون شہزاد اور4 بچوں کی ماں بہن شازیہ ایوب کو موت کے گھاٹ اتار دیا اور ہوائی فائرنگ کرتے ہوئے فرار ہو گیا،بتایاگیاہے کہ نواحی چک نمبر121/RB ہنجلی کے زمیندار محمد ایوب باجوہ کے جواں سالہ بیٹے ہارون شہزادکی شادی11نومبر کو ہونا قرار پائی تھی، محمد ایوب کا بڑا بیٹا طاہرعمران اس شادی سے نا خوش تھا اور گھر والوں پر اس رشتہ کو توڑنے پر زور دیتا تھا مگر اس کے گھر والے یہ رشتہ ختم کرنے پر راضی نہ ہوئے، جس کی وجہ سے آئے روز گھر میں لڑائی جھگڑا ہوتا رہتاتھا، گزشتہ روز نماز فجر کے وقت یہ جھگڑا شدت اختیار کرگیا اور طاہرعمران نے اپنے دستی پستول سے فائرنگ کر کے اپنے بھائی ہارون شہزاد جس کی 6 دن بعد شادی تھی اور بہن شازیہ ایوب جو 4 بچوں کی ماں تھی کوموت کے گھاٹ اتار دیا اور خود ہوائی فائرنگ کرتا ہوا موقع سے فرار ہو گیا، پولیس تھانہ صدر نے مقتولین کے والد محمد ایوب کی مدعیت میں ملزم طاہر عمران کے خلاف مقدمہ درج کر کے اس کی تلاش شروع کردی ہے ،ہارون شہزاد کے قتل پر خوشیوں بھرے گھر کی فضاء ماتم کدے میں بدل گئی ،جس گھر میں چند دن بعد شہنائی گونجنے والی تھی اس کو سسکیوں اور آہوں نے اپنی لپیٹ میں لے لیا ۔بہن بھائی کے بہیمانہ قتل سے پور گاؤں کی فضا سوگوار اور ہر آنکھ اشکبار ہوگئی۔

مزید :

صفحہ آخر -