عمران خان کی جہانگیر ترین کی رہائشگاہ پر پارٹی عہدیداروں سے ملاقات

عمران خان کی جہانگیر ترین کی رہائشگاہ پر پارٹی عہدیداروں سے ملاقات

  

لودھراں ( نما ئند ہ پاکستا ن) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے گزشتہ روزسیکرٹری جنرل جہانگیر خان ترین کی رہائش گاہ پر جنوبی پنجاب کے تمام اضلاع کے ضلعی صدور، جنرل سیکرٹریز ، دیگر پارٹی عہدیداروں سے ملاقات کی۔ عمران خان نے جنوبی پنجاب میں جلسوں کے بہترین انتظامات کرنے اورموثر عوامی رابطہ مہم چلانے پر رہنماؤں و عہدیداروں کی کارکردگی کو سراہتے ہوئے(بقیہ نمبر53صفحہ7پر )

ہدایت کی آئندہ الیکشن کی بھرپور تیاری کی جائے اور ابھی سے بھرپور الیکشن مہم چلائی جائے۔ پارٹی رہنماؤں کی جانب سے بھی عمران خان کو جنوبی پنجاب میں کامیاب جلسوں پر مبارک باد پیش کی گئی۔ عمرا ن خان نے لودھراں سے پارٹی رہنماؤں،ضلعی بھر کے تنظیمی عہدیداروں و کارکنوں سے بھی ملاقات کی اور ان سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 2015کے مشکل سال میں بھرپور ساتھ دینے پر میں آپ سب کا شکریہ ادا کرتاہوں۔ انہوں نے کہا کہ 2013کے الیکشن میں ن لیگ نے 70سے 80لاکھ ووٹ جعلی ڈالا ۔ ہم نے دھاندلی کے خلاف کیس کیا مگر شریف مافیا تگڑا تھا ۔ ہمیں اس کیس میں کامیابی نہ مل سکی کیوں کہ مافیا نے تمام اداروں پر اپنی جڑیں مضبوطی سے جمارکھی ہیں اور قبضہ کیا ہوا ہے۔ 2015میں ہمیں لودھراں میں جہانگیر ترین کی جیت سے حوصلہ ملا ۔جہانگیر ترین عوام کی طاقت اور محبت سے منتخب ہوئے ۔انہوں نے لودھراں میں مافیا کو شکست دے کرتاریخ رقم کی۔پھر پانامہ کیس میں ہمیں شاندار کامیابی ملی ۔جب سے پانامہ کا فیصلہ ہوا پاکستان بدل چکاہے۔عمران خان نے کہا کہ اب عوام کو بھی یقین ہے کہ پاکستان میں بھی بڑے ڈاکو ؤں کا احتساب ہوسکتاہے جو کہ پہلے ناممکن تھا۔اب 2018میں جوتبدیلی آرہی ہے لوگ بھٹو کی جیت کو بھی بھول جائیں گے۔ یہ تبدیلی ملک کو وہ پاکستان بنادے گی جس کا لیڈر قائد اعظم تھا اور جسکا خواب علامہ اقبال نے دیکھا تھا ۔عمران خان نے کہا کہ نیا پاکستان وہ ہوگا جس میں دس کروڑ غریب عوام کوغربت سے نکالنے کی بہترین پالیسی بنائیں گے۔چین نے تیس سالوں میں 70کروڑ لوگوں کو غربت سے نکالا جو کہ تاریخ میں کہیں نہیں ہوا۔۔ عمران خان نے کہا کہ 2018کے الیکشن کے بعد انشاء اللہ اقتدار میں آکر ایسا معاشر ہ قائم کرینگے جہاں عام آدمی کے بچے کو مفت تعلیم اور مفت انصاف ملے گا۔

عمران عہدیدار ملاقات

مزید :

ملتان صفحہ آخر -