برطانیہ میں 6کروڑ کا گھر خریدنے والے پاکستانی نژاد برطانوی شہری کومنی لانڈرنگ پر 22 ماہ قید کی سزا

برطانیہ میں 6کروڑ کا گھر خریدنے والے پاکستانی نژاد برطانوی شہری کومنی ...
برطانیہ میں 6کروڑ کا گھر خریدنے والے پاکستانی نژاد برطانوی شہری کومنی لانڈرنگ پر 22 ماہ قید کی سزا

  

لندن  (ویب ڈیسک) برمنگھم میں ایک پاکستانی نژاد برطانوی شہری کو منی لنڈرنگ کے جرم میں 22 ماہ قید کی سزا سنادی گئی۔ اس کا دعویٰ تھا کہ اس کے 123 پاکستانی پرائز بانڈز پر انعام نکلے جن سے اس نے برطانیہ میں 6 کروڑ روپے مالیت کا گھر خریدا۔

روزنامہ جنگ کی رپورٹ کے مطابق برمنگھم کے 44سالہ کاشف علی خان کو برطانوی نیشنل کرائم ایجنسی این سی اے نے اکتوبر 2009ءمیں پہلی مرتبہ اس وقت گرفتار کیا جب وہ 74 ہزار 830پاﺅنڈ (تقریباً 1 کروڑ پاکستانی روپے) کسی شخص کو پکڑارہا تھا۔ کاشف علی خان نےتسلیم کیا کہ اس نے اس رقم کی منی لانڈرنگ کی ہے۔ 2012ءاور 2013ءکے دوران دبئی سے کاشف علی خان کے اکاﺅنٹ میں 4لاکھ 12ہزار پاﺅنڈ (تقریباً 6 کروڑ پاکستانی روپے) کی مختلف بھاری ٹرانزکشنز ہوئیں۔ کاشف علی خان کی تفتیش میں نیشنل کرائم ایجنسی کو شواہد ملے کہ اس نے پاکستان میں لوگوں سے ایسے پرائز بانڈ خریدے تھے جن پر انعام نکلے ہوئے تھے لیکن برطانوی تفتیش کاروں کو بیان میں اس نے کہا کہ وہ بہت خوش قسمت ہے کہ اس کے 2012-13ءمیں پاکستانی پرائز بانڈز پر 123 انعامات نکلے۔

اس رقم سے اس نے برمنگھم میں 6 کروڑ روپے مالیت کا گھر خریدا۔ برمنگھم کراﺅن کورٹ میں نیشنل کرائم ایجنسی کے تفتیش کاروں نے شواہد پیش کئے کہ کاشف علی خان نے 123پرئز بانڈز جن پر انعامات ملے تھے بلیک مارکیٹ کے مختلف ایجنٹوں سے خریدے اور کیونکہ وہ اپنی بلیک منی کو وائٹ کرکے برطانیہ لانا چاہتا تھا۔ نیشنل کرائم ایجنسی کی طرف سے ٹھوس ثبوت پیش کرنے پر برطانوی عدالت نے کاشف علی خان کو منی لانڈرنگ کے جرم میں 22ماہ قید کی سزا سنادی۔

مزید :

برطانیہ -