"معافی کی استدعا مسترد نہیں ہوئی بلکہ۔۔۔" فردوس عاشق اعوان بھی بول پڑیں

"معافی کی استدعا مسترد نہیں ہوئی بلکہ۔۔۔" فردوس عاشق اعوان بھی بول پڑیں

  



اسلام آباد (ویب ڈیسک) فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ معافی کی استدعا مسترد نہیں ہوئی، صرف جواب تحریری جمع کرانے کا کہا گیا، مولانا کے آئوٹ ہونے کا خطرہ ہے، موسم ،پچ، حالات اور بائولر دیکھ کر مولانا فیصلہ کریں، ایسا عمل نہ کریں جس سے وہ سیاسی گرائونڈ سے باہر ہو جائیں۔

معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات فردوس عاشق نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا مولانا صاحب چاہتے ہیں ہر بال کو چھکا لگا کر گرائونڈ سے باہر پھینکیں، آئوٹ ہونے کا امکان زیادہ ہے، وزیراعظم قانون کی حکمرانی کی جنگ لڑتے رہے ہیں، انہوں نے 23 سال سیاسی جدوجہد کی، قانون سے متعلق بل اپوزیشن نے پاس نہیں ہونے دیا۔

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا حکومت ہر شعبے میں بہتری کیلئے اصلاحات لا رہی ہے، پسا طبقہ سب سے پہلے ڈسٹرکٹ بار کے دروازے پر دستک دیتا ہے، سائلین کیلئے سہولتوں کا فقدان مسائل کے حل میں رکاوٹ ہے، ڈسٹرکٹ بار کے مسائل وزیراعظم کے نوٹس میں لائی ہوں، وزیراعظم نے متعلقہ وزارتوں کو ہدایات جاری کی ہیں، ضلعی عدالتیں جوڈیشل کمپلیکس میں منتقل ہونی ہیں، عدالت کی شکر گزار ہوں، ضلعی عدالتوں کا جائزہ لینے کا موقع دیا۔

مزید : علاقائی /اسلام آباد