نوازشریف سروسز ہسپتال میں زیرعلاج لیکن اب تک کتنا خرچ ہو چکا ہے؟ ممکنہ تفصیلات منظرعام پر

نوازشریف سروسز ہسپتال میں زیرعلاج لیکن اب تک کتنا خرچ ہو چکا ہے؟ ممکنہ ...
نوازشریف سروسز ہسپتال میں زیرعلاج لیکن اب تک کتنا خرچ ہو چکا ہے؟ ممکنہ تفصیلات منظرعام پر

  



لاہور (ویب ڈیسک) سروسز ہسپتال میں گزشتہ چودہ روز سے زیر علاج سابق وزیراعظم میاں نواز شریف کے علاج پر 15 لاکھ سے زائد کا خرچہ آ چکا ہے۔

دنیا نیوز کے مطابق میاں نواز شریف کو فی الحال ہسپتال سے ڈسچارج نہیں کیا جا رہا۔ میڈیکل بورڈ کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم اپنی مرضی سے جانا چاہیں تو جا سکتے ہیں۔میڈیکل بورڈ ذرائع نے کہا ہے کہ سروسز ہسپتال میں نواز شریف کا علاج سپیشلائزڈ ڈاکٹرز کر رہے ہیں۔ ان کی طبیعت میں بہتری آ رہی ہے اور نواز شریف کے علاج پر 14 روز میں 15 لاکھ سے زائد خرچ ہو چکے ہیں۔سابق وزیراعلیٰ خیبر پختوانخواہ اور وامی نیشنل پارٹی کے نائب صدر امیرحیدر خان ہوتی وفد کے ہمراہ سابق وزیراعظم میاں محمد نوازشریف کی عیادت کیلئے سروسز ہسپتال آئے تاہم انہیں ملاقات کی اجازت نہ مل سکی۔

امیر حیدر خان ہوتی نے مسلم لیگ (ن) کے صدر محمد شہباز شریف سے ملاقات کرکے اپنی اور اپنی جماعت کی جانب سے نواز شریف کیلئے نیک خواہشات کااظہاراو رجلد صحت یابی کیلئے دعا کی۔ بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے امیر حید رخان ہوتی نے کہا کہ میرے علم میں تھا کہ علالت کی وجہ سے نواز شریف سے ملاقات کی اجازت نہیں مل سکے گی لیکن میں اپنا فرض سمجھتا تھا کہ میں عیادت کیلئے یہاں آئوں، میں اے این پی کی جانب سے پیغام لے کر آیا ہوں،ہمارا مسلم لیگ (ن) کے ساتھ اچھا وقت بھی گزرا ہے، آج مسلم لیگ (ن) پر آزمائش ہے اور ہم اس مشکل گھڑی میں ان کے ساتھ ہیں،ہم نواز شریف کی جلد صحت یابی کیلئے دعا گوہیں۔

انہوں نے کہاکہ زندگی اور موت اللہ کے ہاتھ میں ہے لیکن نواز شریف کے ساتھ جو رویہ اپنایا گیا ہے جس طر ح ان کی بیماری کا مذاق اڑایا گیا ہے یہ انتہائی افسوس ناک ہے اور اس کی جتنی بھی مذمت کی جا ئے وہ کم ہے۔

مزید : علاقائی /پنجاب /لاہور