نیب، صحت، مذہبی امور، انسداد منشیات کیلئے سپلیمنٹری گرانٹس کی منظوری، پٹرولیم ڈویژن کا گردشی قرضہ ختم کرنے کیلئے کمیٹی قائم 

نیب، صحت، مذہبی امور، انسداد منشیات کیلئے سپلیمنٹری گرانٹس کی منظوری، ...

  

  اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) اقتصادی رابطہ کمیٹی نے پیٹرولیم ڈویژن کا گردشی قرضہ ختم کرنے کیلئے کمیٹی قائم کردی۔ مشیر خزانہ عبدالحفیظ شیخ کی زیر صدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس کے اعلامیہ کے مطابق ای سی سی نے پیٹرولیم ڈویژن کا گردشی قرضہ ختم کرنے کیلئے کمیٹی قائم کردی،خزانہ، پیٹرولیم، پاور اور پلاننگ ڈویڑن کے حکام سمیت ایس ای سی پی، اوگرا اور دیگر اسٹیک ہولڈرز کمیٹی میں شامل ہیں،کمیٹی 30 روز میں سرکلر قرضے سے متعلق اپنی سفارشات پر مبنی رپورٹ ای سی سی میں پیش کرے گی، ای سی سی نے نیب، وزارت صحت، مذہبی امور اور انسداد منشیات کیلئے سپلیمنٹری گرانٹس منظور کردیں۔وزارت فوڈ نے اجلاس کو گندم کی دستیابی سے متعلق بریفنگ دی،ٹی سی پی نے ایک لاکھ 10 ٹن گندم کی درآمد کیلئے چھٹا ٹینڈر کھول دیا ہے۔ اعلامیہ کے مطابق جنوری 2021ء تک ملک میں گندم وافر مقدار میں موجود ہوگی، جنوری سے ملک میں گندم کی قیمت میں کمی ہونا شروع ہو جائے گی۔ای سی سی نے گلگت بلتستان کیلئے گندم کا کوٹہ ڈیڑھ لاکھ سے ایک لاکھ 60 ہزار میٹرک ٹن کردیا۔کابینہ کی اقتصادی رابطہ کمیٹی کو بتایا گیا ہے کہ آئندہ سال جنوری میں ملک میں گندم وافرمقدارمیں موجود ہوگی جس کے بعد آٹا کی قیمت میں نمایاں کمی ہونا شروع ہو جائے گیاجلاس کے بعد جاری اعلامیہ کے مطابق وزارت فوڈ سیکورٹی نے کمیٹی کو ملک میں گندم کی دستیابی سے متعلق تفصیلی بریفنگ دی ٹی سی پی نے ایک لاکھ دس ہزارٹن گندم کی درآمد کیلئے چھٹا ٹینڈر کھول دیا ہے،آئندہ سال جنوری تک ملک میں گندم وافرمقدار میں موجود ہوگی اورملک میں گندم کی قیمت میں کمی ہونا شروع ہو جائے گی تاہم وزارت کی طرف سے کہا گیا کہ حکومت سندھ کی طرف سے گندم کی امدادی قیمت دوہزارروپے فی من مقررکرنے سے مشکلات پیدا ہورہی ہیں وفاقی حکومت آئندہ سال گندم کی امدادی قیمت سولہ سو روپے فی من مقرر کی ہے اعلامیہ کے مطابق مشیرخزانہ ڈاکٹر عبدالحفیظ شیخ نے اجلاس کے فوری بعد وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ سے رابطہ کیا وزیر غذائی تحفظ سید فخر امام بھی ویڈیو کال کے دوران موجود تھے،اجلاس میں گندم کی یکساں امدادی قیمت مقرر کرنے پر غورکیا گیا،مشیر خزانہ نے گندم کی یکساں امدادی قیمت مقرر کرنے کی ضرورت پر زور دیا ای سی سی نے پیٹرولیم ڈویڑن کا گردشی قرضہ ختم کرنے کیلئے کمیٹی قائم کردی جس میں خزانہ، پیٹرولیم، پاور اور پلاننگ ڈویژن کے حکام سمیت ایس ای سی پی، اوگرا اور دیگر اسٹیک ہولڈرز کمیٹی میں شامل ہیں کمیٹی تیس روز میں گردشی قرض سے متعلق اپنی سفارشات پر مبنی رپورٹ پیش کرنے کی ہدایات دی گی،

ای  سی سی

مزید :

صفحہ اول -