جنوبی پنجاب کو بااختیار صوبہ بنائے بغیر ترقی خواب‘ مخدوم احمد محمود 

  جنوبی پنجاب کو بااختیار صوبہ بنائے بغیر ترقی خواب‘ مخدوم احمد محمود 

  

بورے والا(تحصیل رپورٹر)سابق گورنر پنجاب پیپلز پارٹی جنوبی پنجاب کے صدر  مخدوم سید احمد محمود نے کہا ہے کہ پی ڈی ایم کے کامیاب جلسوں کے بعد حکمران بوکھلا گئے ہیں وہ اپنی دو سالہ کاردگی کا جواب دینے کی بجائے اپوزیشن کے خلاف برسر پیکار ہیں ملک(بقیہ نمبر4صفحہ 6پر)

 میں اداروں کے خلاف جو زبان استعمال ہورہی ہے اسکی ذمہ دار حکومت اس کے وزراء  اور مشیر خود ہے حکومت نے اپوزیشن کو دیوار سے لگا کر ایسی زبان استعمال کرنے پر مجبور کیا ہے کیونکہ کوئی بھی شخص کسی کو جان بوجھ کر گالی نہیں دیتا جب تک اسے مجبور نہ کیا جائے اگر تین بار ملک کا وزیر اعظم اور دو مرتبہ بڑے صوبے کا وزیر اعلی  رہنے والا ایسی زبان استعمال کرنے پر مجبور ہواہے  تو اسکے بیان سے زیادہ اسکے پیچھے محرکات کو دیکھنا ہوگا ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز پیپلزپارٹی کے سینئر رہنما کیپٹن ر محمد اسماعیل کے بڑے صاحبزادے پیپلز لیبر بیورو جنوبی پنجاب کے نائب صدر چوہدری طارق محمود کے انتقال اور۔پیپلزپارٹی کے سابق امیدوار قومی اسمبلی کرنل ر راو عابد علی کے انتقال پر راو عتیق الرحمن۔راو ضیاء  الرحمن سے ان کی رہائش گاہوں پر تعزیت کا اظہار کرنے کے بعد پیپلزپارٹی جنوبی پنجاب کی رہنما محترمہ شگفتہ چوہدری کی رہائش گاہ پر میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا انہوں نیکہا کہ ملکی تاریخ میں پہلی مرتبہ پنجاب میں اسٹیبلشمنٹ کی لڑائی ہورہی ہے اس سے پہلے بلوچستان،سندھ اور کے پی کے میں یہ لڑائی تھی جوکہ اچھا شگون نہیں ہے کیونکہ حکومت کا کوئی سیاسی وجود نہیں جب تک غیر سیاسی قوتوں کا ساتھ ہے عمران خان اسوقت تک اقتدار میں ہے اپوزیشن جماعتوں کو اکٹھا کرنے کی ذمہ دار خود حکومت ہے حکومت کے وزیر اعلی کو اب تک یہ یقین نہیں کہ وہ وزیر اعلی ہیں ایسا ہی حال وزراء  کا بھی ہے اس موقع پر ممبر فیڈرل کونسل عبدالقادر شاہین‘  نتاشا دولتانہ،محمود حیات عرف ٹوچی خاں‘ اعجاز حسین شاہ۔خواجہ رضوان عالم،چوہدری محمود اختر گھمن‘ شگفتہ چوہدری‘ طاہر سلیم چوہدری‘ حاجی عنایت اللہ وسیئر‘ محمدعلی بھٹی۔نعمان رشید آرائیں۔سلیم قریشی۔میاں محمد امین۔ محمد صدیق، غلام مرتضی چوہان،ملک صغیر انجم،عبدالغفور رحمانی۔شہباز ڈوگر،چوہدری گلزار احمد گجر اور مرحوم طارق محمود  کے بیٹے چوہدری شاہزیب طارق اور چوہدری اویس طارق بھی موجود تھے ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ نااہل حکومت کے ہر فیصلے نے ملک میں مہنگائی اور معاشی بدحالی کو فروغ دیا ہے حکومت مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے بین الاقوامی سطح پر ہمارا ملک آئیسولیشن کا شکار ہوچکا ہے اور اس آئیسولیشن سے بلاول کے علاوہ کوئی نہیں ریسکیو نہیں کرسکتا بلاول بھٹو گلگت بلتستان میں عوامی لحاظ سے کامیاب ہوچکے ہیں لیکن اب رزلٹ بنانے والے کیسا بناتے ہیں یہ کچھ پتا نہیں۔انہوں نے کہا کہ جنوبی پنجاب کو مکمل بااختیار صوبہ بنائے بغیر ترقی محض ایک خواب ہے انہوں پیپلزپارٹی کے عہدیداروں کو ہدایت کی کہ وہ ملتان میں ہونے والے پی ڈی ایم کے جلسے کی بھر پور تیاری کریں  اور کارکنوں کی زیادہ سے زیادہ شرکت کو یقینی بنائیں۔

احمد محمود

مزید :

ملتان صفحہ آخر -