حکومت کو ٹف ٹائم دینے کیلئے پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کا قومی اسمبلی کے اجلاس میں مشترکہ حکمت عملی اپنانے کا فیصلہ 

حکومت کو ٹف ٹائم دینے کیلئے پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کا قومی اسمبلی کے ...
حکومت کو ٹف ٹائم دینے کیلئے پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن کا قومی اسمبلی کے اجلاس میں مشترکہ حکمت عملی اپنانے کا فیصلہ 

  

اسلام آباد ( ڈیلی پاکستان آن لائن) حکومت کو ٹف ٹائم دینے کے لئے پاکستان پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ نے قومی اسمبلی کے اجلاس میں  مشترکہ حکمت عملی اپنانے کا فیصلہ کرلیا ۔

اپوزیشن کی دو بڑی جماعتوں میں رابطہ ہوا جس میں پیپلزپارٹی اور مسلم لیگ ن نے قومی اسمبلی کا اجلاس عجلت میں بلانے پر تشویش کا اظہار کیا، دونوں جماعتوں نے آئندہ ہفتے ہونے والے قومی اسمبلی کے اجلاس میں حکومت کو ٹف ٹائم دینے کیلئے مشترکہ لائحہ عمل اپنانے کا فیصلہ کیا ، پیپلز پارٹی کی شازیہ مری اور مسلم لیگ ن کی مریم اورنگزیب حکمت عملی مرتب کریں گی۔

نجی ٹی وی ہم نیوز کے مطابق شازیہ مری نے کہا کہ عوام دشمن پالیسیوں اور جمہوریت کش اقدامات کا مشترکہ جواب دیا جائے گا،پٹرول کی قیمتوں میں اضافہ واپس نہ لیاگیا توحکومت سنبھل نہیں پائے گی، پیپلزپارٹی مہنگائی کے خلاف جلد اپنے اگلے احتجاجی پروگرام کا اعلان کرے گی، عوام کو عمران خان نے ریلیف کے نام پر تکلیف دی، حساب کا وقت آچکا ہے، عمران خان آئی ایم ایف کے ایجنڈے پر عوام دشمن اقدامات کررہے ہیں۔

شازیہ مری نے کہا کہ ہم نے کہا تھا کہ پی ٹی آئی ایم ایف بجٹ عوام دشمن ہے۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -الیکشن -قومی اسمبلی -