بنگلہ دیشی فاسٹ باﺅلر نے گرفتاری دیدی، وجہ انتہائی شرمناک

بنگلہ دیشی فاسٹ باﺅلر نے گرفتاری دیدی، وجہ انتہائی شرمناک
بنگلہ دیشی فاسٹ باﺅلر نے گرفتاری دیدی، وجہ انتہائی شرمناک

  

ڈھاکا(مانیٹرنگ ڈیسک) بنگلہ دیش کے فاسٹ باﺅلر شہادت حسین کو 11سالہ ملازمہ پر تشدد کے الزام میں ہر طرح کی کرکٹ کھیلنے کیلئے معطل کردیا گیا ۔ پولیس گزشتہ ہفتے سے روپوش ہونے والے 29 سالہ فاسٹ باﺅلر کو ڈھونڈ رہی تھی لیکن اب انہوں نے گرفتاری دے دی ہے۔پولیس انسپکٹر انور حسین نے میڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ ملازمہ کی آنکھوں اور جسم کے دیگر حصوں پر تشدد کے نشانات پائے گئے ہیں اور انہیں سڑک پر روتے ہوئے دیکھا گیا جس کے بعد انہیں ہسپتال منتقل کیا گیاجہاںڈاکٹروں کی ٹیم بچی کا علاج کر رہی ہے۔متاثرہ لڑکی محفوظہ اختر کا کہنا ہے کہ کرکٹر شہادت حسین اور ان کی اہلیہ نے اس پر تشدد کیا تھا۔

نامعلوم کالرز کی معلومات دینے والی حیران کن ایپ اردومیں بھی دستیاب

اس حوالے سے بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کے ترجمان جلال یونس نے میڈیا سے گفتگو میں کہا کہ شہادت حسین پر الزامات سے ہماری ساکھ متاثر ہوئی ہے، اسی لیے ہم نے وقتی طور پر انہیں بنگلہ دیشی کرکٹ بورڈ کے زیر انتظام ہر طرح کی کرکٹ کیلئے معطل کردیا ہے۔پولیس نے بچی کے بیان کے بعد فوری طور پر کرکٹر اور ان کی اہلیہ نریتو شہادت کے گھر پر چھاپہ مارا لیکن وہ دونوں گھر چھوڑ کر چلے گئے اورکہیں روپوش ہو گئے تھے۔ گزشتہ روز پولیس نے ایک کارروائی میں ان کی اہلیہ کو گرفتار کر لیا جس کے بعد آج کرکٹر نے خود بھی گرفتاری دے دی۔ پولیس نے انہیں عدالت میں پیش کیا جہاں دونوں میاں بیوی نے اپنے اوپر لگائے گئے الزامات کی تردید کر دی۔عدالت نے ان کی درخواست ضمانت مسترد کرتے ہوئے ریمانڈ پر جیل بھیج دیا ہے۔

بھارت میں لوگ باتھ روم استعمال کرنے کی بجائے کیا کر رہے ہیں؟ جان کر آپ سر پکڑ کر بیٹھ جائیں گے

مزید : کھیل