پشاور یونیورسٹی کے طلباء پر پولیس تشدد کی مذمت کرتے ہیں، تنویر اسدی

پشاور یونیورسٹی کے طلباء پر پولیس تشدد کی مذمت کرتے ہیں، تنویر اسدی

  

لاہور(ایجوکیشن رپورٹر)انجمن طلباء اسلام کے مرکزی سیکریڑی جنرل تنویر حسین اسدی اور دیگر رہنماؤں راجہ منصور اقبال ،حافظ غلام محی الدین اویسی ، ملک ثاقب اعوان ،حسنین مصطفائی ،سیدوقار علی شاہ ، محمد اکرم رضوی ،عامر اسماعیل ،ملک خرم شہزاد اور یگر نے اپنے مشترکہ بیان میں پشاور یونیورسٹی کے طلباء پر پولیس تشدد کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا کہ پشاور یونیورسٹی کے طلباء پرریاستی طاقت کا استعمال بلاجواز ہے ۔حکومت گرفتار طلباء کو فوری رہا کرے ۔جمہوریت کے دعویداروں نے معصوم طلباء پر تشدد کرکے جمہوریت کا چہرہ داغ دار کردیا ہے ۔ناکام اور بدنام حکمران ہوش کے ناخن لیں ۔

تین ماہ کا دھرنا دینے والوں کو طلباء کا ایک دن کا دھرنا ہضم نہیں ہوا۔ملک نا تجربہ کار ہاتھوں میں غیر محفوظ ہے۔ حکومت کی بچگانہ حرکتوں سے پاکستان کی دنیا بھر میں جگ ہنسائی ہو رہی ہے۔ قوم سیاسی ڈرامے بازوں سے تنگ آ چکی ہے۔نظام زر و ظلم کے پرخچے اڑانے کا وقت آ گیا ہے۔فیسوں میں ہوش ربااضافہ غریب طلباء پر تعلیم کے دروازے بند کرنے کے مترادف ہے ۔نئی حکومت عوام کو ریلیف کی بجائے تکلیف دینے کے راستے پر چل پڑی ہے۔طلباء کا تعلیمی استحصال بند کیا جائے اور ملک بھر میں تعلیمی ایمرجنسی کا نفاذ کیا جائے ۔معصوم اور نہتے طلباء پر تشدد نے دور آمریت کی یاد تازہ کر دی ہے ۔۔۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -