ق لیگ کے صفدرخان باغی کی حکومت اور ڈاکٹروں میں صلح کرانے کی پیشکش

    ق لیگ کے صفدرخان باغی کی حکومت اور ڈاکٹروں میں صلح کرانے کی پیشکش

  

پشاور(سٹی رپورٹر) پاکستان مسلم لیگ (ق) کے صوبائی خیبرپختونخوا سیکرٹری اطلاعات صفدر خان باغی نے حکومت اور ڈاکٹروں میں صلح کرانے کیلئے ثالث کا کردار ادا کرنے کی پیشکش کردی اور حکومت اور ڈاکٹروں سے مطالبہ کیا ہے کہ مل بیٹھ کر مسئلے کا حل نکالا جائے تاکہ ہسپتالوں میں علاج نہ ملنے کے باعث قیمتی جانوں کا ضیاع نہ ہو سکے۔ انہوں نے اپنے ایک اخباری بیان میں کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کی حکومت اور ڈاکٹروں کے مابین اختلافات نے گھمبیر شکل اختیار کر لی ہے اور گزشتہ کئی دنوں سے سیاسی پارٹیاں سیاسی پوائنٹ سکورنگ کر رہی ہیں جس کے باعث ڈیڈ لاک برقرار ہے اور افسوس کی بات یہ ہے کہ کسی پارٹی نے بھی ثالثی کی پیشکش نہیں کی ہے جس سے دونوں جانب سے ہٹ دھرمی دیکھنے میں آرہی ہے جس کا خمیازہ عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت اور ڈاکٹروں کو روش بدلنا چاہئے کیونکہ عوام کو ہسپتالوں میں بہت تکلیف کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ صوبائی وزیر اطلاعات شوکت یوسفزئی کے بیانات نے جلتی پر تیل کا کام کیا جبکہ وزیر اطلاعات کو لہجہ نرم کرنا اور خوش اخلاقی سے پیش آنا چاہئے کیونکہ ڈاکٹروں کا پیشہ ایک معزز پیشہ جنہیں مسیحا کے نام سے بھی پکارا جاتاہے۔ ایک طرف حکومت کشمیر اور افغان کے مسائل کو بائلیٹرل ڈائیلاگز کے زریعہ حل کرنا چاہتی ہے تو دوسری جانب ڈاکٹروں و مسیحاؤں پر لاٹھیاں برسائی گئیں اور شیلنگ کی گئی اور اب ان کے جائز مطالبات بھی تسلیم نہیں کئے جا رہے ہیں اور ڈاکٹروں کے ساتھ سخت رویہ رواں رکھا گیا ہے جس سے مریضوں اور لوگوں کو بھی ذہنی کوفت میں مبتلا کیا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر مسئلہ حل نہیں کیا جاتا اور انسانی جانوں کا ضیاع ہوتا رہا خدا نخواستہ تو اس تمام صورتحال کی ذمہ داری حکومت اور ڈاکٹروں دونوں پر عائد ہوگی۔ پاکستان مسلم لیگ (ق) کے صوبائی ترجمان صفدر باغی نے صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا کہ دوسری جانب پورے صوبہ خیبرپختونخوا مہلک وبا ڈینگی وائرس مچھر کی وجہ سے ھزاروں مریضوں کی حالت زار بگڑی ھوئی ھے حکومت اور ڈاکٹروں کو ایمرجنسی بنیاد پر اس وبا کا ملکر مقابلہ کرنا ھوگا نہ کہ آپس میں اختلافات لڑائی جھگڑے کریں۔ انہوں نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا میں گزشتہ 6 سالوں سے صرف ریفارمز ہی دیکھتے آرہے ہیں اس پر عملی ٹھوس اقدامات اٹھائے جائیں اور تجرباتی لیبارٹری سے نکل کر عملی طور پر کام کرنا چاہئے مسلم لیگ (ق) کے صوبائی ترجمان نے کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا میں افراتفری کے سماں سے اندرون و بیرون‘ ملک دشمن عناصر کو فائدہ ہو گا اور نقصان ریاست کو خداناخواستہ پہنچے گا۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -