مولانا فضل الرحمن اپنی ڈوبتی سیاست بچا رہے ہیں: عمران خان 

    مولانا فضل الرحمن اپنی ڈوبتی سیاست بچا رہے ہیں: عمران خان 

  

اسلام آباد(سٹاف رپورٹر،مانیٹرنگ ڈیسک، نیوز ایجنسیاں)وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ قوم پر مولانا فضل الرحمن کے سیاسی مقاصد مزید عیاں ہونے چاہیں، وہ اپنے احتجاج کیلئے اب 27 اکتوبر ی تاریخ نہ بدلیں۔تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت حکومتی اور پارٹی ترجمانوں کے اجلاس کی اندرونی کہانی سامنے آ گئی ہے۔  ذرائع کے مطابق اس اہم اجلاس میں مولانا فضل الرحمان اور اپوزیشن کے احتجاج پر بھی بات چیت کی گئی۔ اجلاس سے خطاب میں وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان اپنی ڈوبتی سیاست بچا رہے ہیں۔ حکومت مدرسوں میں ریفارمز لا رہی ہے جس کی مولانا کو فکر ہے۔وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ مدارس اصلاحات پر مولانا زیادہ پریشان ہیں۔ مدارس میں اصلاحات سے طلبہ ایسے سیاسی مقاصد کے لیے استعمال نہیں ہو سکیں گے۔ اجلاس کے شرکا کا کہنا تھا کہ مولانا فضل الرحمان اب 27 اکتوبر کی تاریخ نہ بدلیں اور اسلام آباد آجائیں۔ قوم پر بھی مولانا کے سیاسی مقاصد مزید عیاں ہونے چاہیں۔بعد ازاں وزیراعظم عمران کی زیر صدارت اعلیٰ سطحیٰ اجلاس منعقد ہوا  جس میں  پاکستان سٹیل ملز کی بحالی سے متعلق اقدامات اور تجاویز پر غور کیا گیا، چیئرمین سٹیل مل نے اجلاس شرکاء کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ پاکستان سٹیل مل کی بحالی کیلئے چین اور روس کی کمپنیوں نے دلچسپی ظاہر کی ہے، اس موقع پر وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان سٹیل کی بحالی حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے، کیونکہ قومی خزانے پر بوجھ بننے والے ادارے کی بحالی ضروری ہے، انہوں نے کہا کہ گزشتہ حکومتوں نے سٹیل مل کی بحالی کیلئے کوئی کام نہیں کیا، لہذا گزشتہ حکومتوں کا معاملہ فراموش کرنا ملک و قوم پر ظلم کے مترادف ہے، انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف حکومت پاکستان سٹیل مل کو بحال کرنے کیلئے ہر ممکن اقدامات کر رہی ہے اور اسے منافع بخش ادارہ بنانا چاہتی ہے، ہم چین اور روس کمپنیوں کا سٹیل مل کی بحالی کیلئے اظہار دلچسپی کا خیر مقدم کرتے ہیں، انہوں نے کہا کہ ہم قومی ادارے کو فعال کرکے قومی خزانے پر بوجھ کو کم کر سکتے ہیں۔ اجلاس میں   مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد، وزیر نکاری میاں محمد سومرو، چیئرمین بورٖڈ آف ڈائریکٹرز سٹیل عامر ممتاز واعلیٰ حکام شریک ہوئے۔وزیراعظم عمران خان سے گوجرانوالہ ڈویژن کے اراکین قومی اسمبلی نے ملاقات کی اور اپنے حلقوں کے  عو امی مسائل سے وزیراعظم کو آگاہ کیا۔  ملاقات کرنے والوں میں اراکین قومی اسمبلی امتیاز احمد چوہدری، شوکت علی بھٹی، سید فیض الحسن شامل تھے۔ اراکین نے وزیراعظم کو اپنے اپنے حلقوں میں صحت، تعلیم و دیگر مسائل سے آگاہ کیا جبکہ عمران خان نے اراکین کو مسائل کے حل کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہاکہ ملکی تاریخ کا سب سے بڑا فلاحی پروگرام ”احساس“ کا اجراء کر دیا گیا ہے جس کے تحت عوام کو صحت کارڈ جاری کئے جا رہے ہیں اور صحت کارڈز عوام کی مشکلات میں کمی کے لئے اہم کردار ادا کر رہے ہیں۔ وزیراعظم نے ارکان کو عوام کے مسائل حل کرنے میں متحرک کردار ادا کرنے کی ہدایت بھی کی۔ انہوں نے کہا کہ حکومت غربت کے خاتمے کے لئے احساس پروگرام کے تحت عوام تک ہر ممکن سہولیات پہنچا رہی ہے اور عوام  کی خدمت ہمارا اولین مشن ہے، ملاقات کے دوران پی ٹی آئی کے مرکزی رہنما نعیم الحق بھی موجود تھے۔ 

عمران خان

مزید :

صفحہ اول -