مولانا صاحب اسلام آباد نہیں کنٹرول لائن اور بھارت پر چڑھائی کریں: فردو س عاشق

    مولانا صاحب اسلام آباد نہیں کنٹرول لائن اور بھارت پر چڑھائی کریں: فردو س ...

  

اسلام آباد (آئی این پی)وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ پوری قوم مظلوم کشمیریوں کی آواز بن کرڈٹی ہوئی ہے، مولاناصاحب کو چڑھائی کرنی ہے تو ایل اوسی اور بھارت پر کریں لیکن وہ اسلام آباد میں چڑھائی پر بضد ہیں، مدرسے کے معصوم بچوں کو مولاناصاحب کی سیاست کی بھینٹ نہیں چڑھنے دیں گے۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ مولاناصاحب کو ملک،عوام کا نہیں اپنی ذات کا درد ہے، ان کو جن جماعتوں پر یقین تھا وہ منافقت کررہی ہیں، دو سیاسی جماعتیں ان کے کندھوں پر چڑھ کر آگے بڑھتی ہیں۔ یہ منافقت کی سیاست میں ایک دوسرے کو دھوکا دے رہے ہیں، یہ ایک دوسرے کودھوکادیکر ذاتی مفادات کاتحفظ چاہتے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ توقع ہے  مولاناصاحب دونوں جماعتوں کے عزائم کو بھانپیں گے، دونوں سیاسی جماعتیں اپنے مقاصد کیلئے کوشاں ہیں، مولاناصاحب جس ایجنڈے پرچل رہے ہیں عوام ان کے ساتھ نہیں، ان کا ایجنڈا دیوانے کا خواب ہے۔ دوسری طرف سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں  فردوس عاشق اعوان نے کہا  طالبان پولیٹیکل کمیشن کے وفد کیساتھ دفتر خارجہ میں مذاکرات کا انعقاد مفاہمتی عمل کیلئے نیک شگون ہے تاہم وزیراعظم سے طالبان وفد کی کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔ایک اور ٹویٹر پیغام میں فردوس عاشق اعوان  نے کہا کہ بلاول صاحب!قومی اداروں کو متنازعہ نہ بنائیں، آپ کو عوام کا نہیں لوٹی دولت ہاتھ سے جانے کا درد ہے،ڈوبتی سیاست کا ملبہ ابو اور پھوپھو جی کی کرپشن پر ڈالیں۔انہوں نے کہا کہ قومی سلامتی کے ادارے ملکی دفاع کے ضامن ہیں،دہشت گردی کے خلاف جنگ اور قیام امن کیلئے انہوں نے لازوال قربانیاں دیں۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ بلاول کی اداروں کے متعلق غیر ذمہ دارانہ گفتگو کی مذمت کرتے ہیں،بلاول کے غیر ذمہ دارانہ بیانات ثبوت ہے کہ کرپشن مقدمات میں ان کے پاس کوئی قانونی دفاع موجود نہیں اور کیاکرپشن کا دفاع ہو بھی سکتا ہے؟۔

ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان

مزید :

صفحہ اول -