”کیا کروں،حملہ کردوں؟“وزیراعظم کے بیان پر مولانا فضل الرحمان نے ہنستے ہوئے حیران کن جواب دے دیا

”کیا کروں،حملہ کردوں؟“وزیراعظم کے بیان پر مولانا فضل الرحمان نے ہنستے ہوئے ...
”کیا کروں،حملہ کردوں؟“وزیراعظم کے بیان پر مولانا فضل الرحمان نے ہنستے ہوئے حیران کن جواب دے دیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم عمران خان کے بھارت پر حملے سے متعلق اپوزیشن سے سوال پر مولانا فضل الرحمان نے مسکراتے ہوئے رد عمل دے دیا ۔ان کا کہنا تھا کہ وزیر اعظم نے اپوزیشن سے سوال کیا تھا کہ کیا کروں ،کشمیر پر حملہ کردوں ؟،کشمیر کمیٹی کا چیئر مین کیا کرتا ؟حملہ کرتا ؟۔انہوں نے کہا کہ وزیراعظم ایسی باتیں کرتے ہیں جو سمجھ سے بالا ہیں ۔

پریس میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ حکومت کا جانا ناگزیر ہو چکا ،یہ جنگ حکومت کے خاتمے پر ہی ختم ہوگی ،ہماری جنگ کا میدان پوراملک ہوگا، سربراہ جے یو آئی(ف)نے کہا کہ صورتحال سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی تبدیل کرتے رہیں گے ،پورے ملک سے انسانوں کا سیلاب آرہاہے،حکومت تنکوں کی طرح بہہ جائیگی ،صحافی کے سوال ”نوازشریف دور میں تحریک انصاف نے دھرنا دیا تو سابق آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے عمران خان کو ملاقات کیلئے بلوایا تھا،اگر آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ نے آپ کو ملاقات کیلئے بلایا توکیا آپ ملاقات کریں گے “کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ آرمی چیف نے ملاقات کیلئے بلوایاتو ضرورجاوں گا۔

مزید :

قومی -