مختلف شہروں میں حادثے، 4جاں بحق، ملتان سے نوجوان کی لاش برآمد 

      مختلف شہروں میں حادثے، 4جاں بحق، ملتان سے نوجوان کی لاش برآمد 

  

         ملتان،ٹبہ سلطان پور،رحیم یارخان،لیاقت پور،ڈاہرانوالہ (وقا ئع نگار،بیورو رپورٹ،نامہ نگار)تھانہ سیتل ماڑی کے علاقے 32 سالہ شخص کی نعش برآمد ہوئی ہے جس کو پولیس نے قبضے میں نشتر ہسپتال کے سرد خانے رکھوا دیا ہے۔معلوم ہوا ہے تھانہ سیتل ماڑی کے علاقے میں گزشتہ روز نامعلوم شخص کو مردہ حالت میں دیکھ کر علاقہ مکینوں نے پولیس کو اطلاع دی۔مقامی پولیس نے موقع پر پہنچ کر نعش قبضے میں لیکر(بقیہ نمبر18صفحہ6پر)

 پوسٹ مارٹم کے لئے نشترہسپتال منتقل کردی۔پولیس ذرائع کے مطابق نعش کے جسم پر بظاہر کوئی تشدد کے نشانات نہ پائے گئے۔اور نا ہی  نعش کی شناخت ہوسکی تاہم کارروائی شروع کردی گئی ہے۔    نواحی  چک 110سکس آر کے قریب سامنے سے آنیوالے موٹر سائیکل کو بچاتے ہوئے پینٹ کی بالٹیوں سے بھرا ہائی ایس ڈالا اُلٹ گیا جس کے نتیجے میں ڈالے کا ڈرائیور حامد رضا شدید زخمی ہوگیا جنہیں ریسکیو 1122کی ٹیم نے ابتدائی طبی امداد کے بعد قریبی رورل ہیلتھ سنٹر فقیر والی منتقل کیا جہاں پر وہ جانبر نہ ہوسکا اور دم توڑ گیا، پولیس مصروف تفتیش ہے۔ چیمہ ٹان فیروزہ کے رہائشی دو حقیقی بھائی 45 سالہ عبدالجبار اور 40 سالہ عبدالستار اپنی کار نمبریFW246 پر سوار ہوکر کام کے سلسلہ میں جارہے تھے کہ تیز رفتاری کے باعث بے قابو ہوکر خانپور روڈ بستی نوناری کے قریب سامنے سے آنے والے ٹریلر نمبری TLM566 سے دھماکے سے ٹکراگئے جس کے نتیجے میں عبدالجبار زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے موقع پر دم توڑ گیا جبکہ بھائی عبدالستار شدید زخمی ہوگیا۔ اطلاع پاکر مقامی پولیس اور ریسکیو عملہ نے موقع پر پہنچ کر لاش اور زخمی کو ہسپتال منتقل کردیا۔ پولیس نے واقعہ کی تحقیقات شروع کردی ہے۔چیمہ ٹان فیروزہ کے دو بھائی عبدالجبار اور عبدالستار  کار نمبر ایف ڈبلیو 246 پر بھاولپور جا رہے تھے کہ بستی نوناری لیاقت پور کے قریب تیز رفتاری کے باعث ان کی کار ٹرالر سے ٹکرا گئی جس کے نتیجے میں عبدالجبار موقع پر ہی دم توڑ گیا جبکہ عبدالستار شدید زخمی ہوگیا نعش اور زخمی کو ریسکیو 1122 نے تحصیل ہیڈکوارٹر ہسپتال لیاقت پور منتقل کر دیا۔ تھانہ رکن پور کی حدود سردار گڑھ میں واقع پٹرول پمپ کے قریب آئس فیکٹری سے سردار گڑھ کے رہائشی 60 سالہ کرم حسین کو کام پر آنے والے مزدوروں نے مردہ حالت میں دیکھ کر پولیس کو اطلاع فراہم کردی جس پر مقامی پولیس نے موقع پر پہنچ کر کرم حسین کی لاش تحویل میں لیکر پوسٹ مارٹم کے لئے شیخ زید ہسپتال منتقل کردی۔ ورثا کے مطابق کرم حسین کو نامعلوم ملزمان نے قتل کیا ہے۔ مقتول کے بیٹے در محمد کی رپورٹ پر پولیس نے تین نامعلوم ملزمان کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کرکے کارروائی شروع کردی۔  ملتان سے بہاولنگر جانے والی نجی مان کمپنی کی بس ایل ای ایس 7117 مسافروں کو لیکر جارہی تھی کہ ٹبہ سلطان پورمیں میلسی روڈ پر ساندہ کالونی کے قریب تیز رفتاری کے باعث بس ڈرائیور سے بے قابو ہو کر سامنے جاتی ہوئی ٹریکٹر ٹرالی نمبری ایس جی سی4609 کے ساتھ ٹکرا گئی جس کے باعث ٹریکٹر کے مرگارڈ پر بیٹھا ہوا مزدور بے احتیاطی کے باعث گرگیا اور ٹریکٹر ٹرالی کے ٹائروں کے نیچے آکر کچلا گیاجو موقع پر ہی جابحق ہو گیا جس کی شناخت محمد ناصر سکنہ ملتان کے نام سے ہوئی ہے حادثے میں ٹریکٹر ٹرالی پر سوار3مزدوروں اور5بس کے مسافروں سمیت8 افراد زخمی ہوگئے اطلاع کے باوجود ریسکیو1122ٹبہ سلطان پوراور پولیس اہلکار تاخیر سے پہنچنے جس کی وجہ سے علاقہ کی عوام نے اپنی مدد آپ کے تحت حادثے میں جابحق ہونے والے اور زخمیوں کو طبی امداد کے لئے رورل ہیلتھ سنٹر ٹبہ سلطان پور منتقل کیا واضع رہے کہ حادثے کا شکار ہونے والی ٹریکٹر ٹرالی پر سوار مزدور میلسی سے گندم کا بھوسہ لوڈ کرنے کے لئے جارہے تھے کے حادثے کاشکار ہوگئے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -