قومی نشان کیساتھ مصر کے طیاروں کی اسرائیل کیلئے پر وازوں کا آغاز تاریخی قرار

  قومی نشان کیساتھ مصر کے طیاروں کی اسرائیل کیلئے پر وازوں کا آغاز تاریخی ...

  

          تل ابیب (آ ن لائن)مصر کی قومی ایئرلائن ”ایجپٹ ایئر“ کے قومی نشان کیساتھ طیارہ پہلی بار اسرائیلی سرزمین پر اترا،جسے اسرائیل ایئر پورٹ حکام نے ”تاریخی“ موقع قرار دیا۔ میڈیا رپورٹ کے مطابق مصر، عرب دنیا کا پہلا ملک ہے جس نے 1979 ء میں امن معاہدے کے ذریعے اسرائیل سے تعلقات قائم کیے تھے اور دونوں ممالک کے درمیان براہ راست پروازیں معاہدہ کی پیروی کرتی ہیں،تاہم اس سے قبل اسرائیل کیلئے مصر کی پروازیں ایجپٹ ایئر کی ماتحت ایئر لائن ”ایئر سینائی“ آپریٹ کرتی تھی جو خصوصی طور پر اسرا ئیلی راستے کیلئے اڑان بھرتی تھی جس سے ایجپٹ ایئر اور صیہونی ریاست کے درمیان بفر قائم تھا۔ اسرائیل ایوی ایشن کے ترجمان آفر لیفلر کا کہنا تھااب ایجپٹ ایئر، اپنے بینر تلے اسرائیل کیلئے ہفتے میں چار پروازیں چلائی گی۔ انہوں نے گزشتہ روزاسرائیلی سرزمین پر اترنے والی مصری پروا ز کو ”تاریخی“ قرار دیتے ہوئے کہا یہ اقدام اسرائیلی وزیر اعظم نفتالی بینٹ کے دورہ مصر کے بعد سامنے آیا جس میں انہوں نے مصری صدر عبدالفتح السیسی ملاقات کے بعد کہا تھا مصرکے صدر عبدالفتح السیسی کیساتھ مستقبل میں گہرے تعلق قائم کرنے کی بنیاد رکھ دی ہے۔ انہوں نے کہا سالانہ ہزاروں اسرائیلی سیاح، صحرائے سینائی اور بحیرہ احمر ریزوٹس سمیت مصر کے مختلف سیاحتی مقامات کا دورہ کرتے ہیں۔مصر کے پہل کرنے کے بعد پانچ عرب ریاستیں اسرائیل سے معمول کے مطابق تعلقات استوار کر چکی ہیں۔مصر کے بعد اگلی ریاست اردن تھی جس نے 1994ء میں اسرائیل سے تعلقات بحال کیے،جبکہ 2020 ء میں متحدہ عرب امارات، بحرین، سوڈان اور مراکش نے اس کی پیروی کی تھی۔

مصر پروازیں 

مزید :

صفحہ آخر -