ترقی کے سفر میں نچلے طبقے کو ترجیح دینا بڑی تبدیلی، شوکت ترین 

  ترقی کے سفر میں نچلے طبقے کو ترجیح دینا بڑی تبدیلی، شوکت ترین 

  

 اسلام آباد (سٹاف رپورٹر) وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا ہے ماضی میں متوسط طبقے کی آمدن کیلئے کچھ نہیں کیا گیا، غریب صرف ترقی کے خواب ہی دیکھتا رہا، معاشی ترقی کیلئے معا شی پالیسیوں کا تسلسل ناگزیر ہے، موجودہ حکومت پائیدار ترقی کیلئے اقدامات کر رہی ہے، پہلی بار ترقی کے سفر میں نچلے طبقے کو ترجیح دی گئی، کامیاب ہنر مند پروگرام کا آغاز کیا جا رہا ہے، کامیاب ہنر مند پروگرام کے تحت ہر گھر سے ایک فرد کو ٹیکنیکل ٹریننگ دی جائیگی، حکومت کی جانب سے صحت کے شعبے میں سب سے بڑا پروگرام متعارف کرایا گیا، کوشش ہے غریب طبقے کو ان کے پاوں پر کھڑا کریں۔ پیر کو کامیاب پاکستان پروگرام کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر خزانہ شوکت ترین نے کہا ماضی میں متوسط طبقے کی زندگی آسان کرنے کیلئے کچھ نہیں کیا گیا، غریب خاندان صرف ترقی کے خواب دیکھتا ہے،ہم مستحکم ترقی چاہتے ہیں،ٹیکس ریونیواور زراعت کو ترقی دے رہے ہیں، وزیراعظم کی ہدایت تھی ہم غریب کو معاشی اثرات کے رحم و کرم پر نہ رہنے دیں، کامیاب پاکستان پروگرام اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے، کامیاب نوجوان پروگرام کو دو سال ہو گئے لیکن صرف دس ہز ا ر لوگ اس سے مستفید ہو سکے،اگر بڑے ادارے یا بینک قرض دیں بھی تو ان کا قرض دینے کا عمل بہت مشکل ہے،اس کے برعکس چھوٹے مائیکرو فنانس ادارے اور این جی اوز جیسے اخوت اور این آر ایس پی کئی سالوں سے لوگوں کو قرض دے رہے ہیں جہاں واپسی کی شرح 99فیصد ہے۔ کامیاب کاروبار پروگرام میں 3سال کیلئے 5لاکھ تک بلاسود قرض دیا جائیگا، کامیاب کسان پروگرام میں کسانوں کی ایک فصل کیلئے ڈیڑھ لاکھ اور دو فصلوں کیلئے 3لاکھ بلا سود قرض فراہم کیا جائیگا۔ نیا پاکستان سستا گھر پروگرام حکومت کا اقدام ہے، بینک اس کو آگے بڑھائیں گے،صحت مند پاکستان پروگرام ہر پاکستانی کیلئے ہے، بیماری کی وجہ سے کئی گھرانوں کی جمع پونجی ختم ہو جاتی ہے ہم نے خیبرپختونخوا سے یہ پروگرام شرو ع کیا اسے پورے پاکستان میں پھیلائیں گے۔ امریکی صدر کہتے ہیں ہم اپنے نچلے طبقے کو اوپر لائیں گے اگر وہاں اب بھی ضرورت ہے تو پاکستان میں بہت زیادہ ضرورت ہے، ہم نچلے طبقے کو اوپر لائیں گے،پہلے یہ لوگ بینکوں سے قرض لیتے تھے یا آڑھتیوں کے ہتھے چڑھ جاتے تھے، ہم غریبوں کو ان کے چنگل سے نکالیں گے،اس پروگرام کیلئے ہم نے سخت محنت کی ہے،اس کو لوگوں کی دہلیز تک پہنچائیں گے،یہ بہت بڑی تبدیلی ہے،1400ارب روپیہ3 سے 5سالوں میں فراہم کریں گے،یہ پروگرام نچلے طبقے میں انقلاب لائیگا، نچلا طبقہ اپنے پاؤں پر کھڑا ہو گا،ہم غریب طبقے کو وہ دیں گے جو سابقہ حکمران  72سالوں میں نہیں دے سکے، نچلے طبقے کو اوپر لانا حکومت کی ترجیح ہے۔ وزیراعظم عمران خا ن اس فلاحی ریاست کے بانی ہیں۔

شوکت ترین 

مزید :

صفحہ اول -