باپ نے 9 ماہ کے بچے کو تشدد کرکے قتل کردیا، درندہ صفت انسان بچے کو   بلے سے پیٹتا اور سگریٹ سے داغتا رہا

باپ نے 9 ماہ کے بچے کو تشدد کرکے قتل کردیا، درندہ صفت انسان بچے کو   بلے سے ...
باپ نے 9 ماہ کے بچے کو تشدد کرکے قتل کردیا، درندہ صفت انسان بچے کو   بلے سے پیٹتا اور سگریٹ سے داغتا رہا

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)ساندہ کے علاقہ میں نشے کے عادی شخص نے اپنے 9 ماہ کے سگے بیٹے کو تشدد کرکے موت کے گھاٹ اتار دیا۔

تفصیلات کے مطابق ساندہ پولیس نے بچےمحمد موسی کی والدہ  کے بیان پر واقعہ کا مقدمہ بچے کے باپ اور اسکی دادی سمیت تین افراد کے خلاف درج کرلیا ہے۔مقدمہ مدعیہ کنول شہزادی کے مطابق اسکے تین بیٹے ہیں جبکہ اسکا شوہر غلام مصطفی نشے کا عادی ہے۔میں نے بچوں پر تشدد اور نشے کے حوالے سے اپنی ساس اور غلام مصطفی کے بہنوئی فیصل کو متعدد بار بتایا مگر انہوں نے کچھ نہ کیا اور الٹا مجھے جیل بھجوانے کی دھمکیاں دیں۔وقوعہ کے روز ملزم غلام مصطفی نے محمد موسی پر تشدد شروع کیا جب میں اسے روکنے کی کوشش کی تو ملزم نے مجھے بھی مارا اور چارپائی پر گراد دیا۔ملزم اس دوران بچے کو مکے مارتارہا ،ملزم نے اسے بیٹ سے بھی مارا،تشدد کے دوران بچے کی موت ہوگئی ۔ملزمان نے مجھے گھر میں قید کردیا اور بچے کو دفنا دیا،واقعہ کا علم ہونے پر میرے اہلخانہ نے مجھے گھر سے بازیاب کروایا۔

پولیس کے مطابق واقعہ کا مقدمہ درج کرلیا گیا ہے،مزید قانونی کارروائی جاری ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -لاہور -