پنڈورا لیکس میں نام سامنے آنے کے بعد مونس الٰہی کا ردعمل بھی سامنے آگیا 

پنڈورا لیکس میں نام سامنے آنے کے بعد مونس الٰہی کا ردعمل بھی سامنے آگیا 
پنڈورا لیکس میں نام سامنے آنے کے بعد مونس الٰہی کا ردعمل بھی سامنے آگیا 

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن )وفاقی وزیر برائے آبی وسائل مونس الٰہی نے کہا ہے کہ میری کوئی آف شور کمپنی نہیں ہے اور نہ ہی میرے پاس کوئی ایسے اثاثے ہیں جو ڈکلیئر نہ کیے گئے ہوں ۔ 

پنڈورا لیکس میں نام سامنے آنے کے بعد مائیکرو بلا گنگ ویب سائٹ ٹوئٹر پر رد عمل دیتے ہوئے مونس الٰہی نے کہا کہ ان کی نہ  کوئی آف شور کمپنی ہے اور نہ ہی ایسا کوئی اثاثہ ہے جسے ڈکلیئر نہ کیا گیاہو، اس حوالے سے وہ تمام قیاس آرائیوں اور الزامات کو مسترد کرتے ہیں۔

واضح رہے کہ پنڈورا پیپرز میں یہ بات سامنے آئی تھی کہ مونس الٰہی نے 2016میں آف شور کمپنی بنانے کے لیے سنگا پور کی کمپنی سے رابطہ کیا تھا ، وہ ایک متنازعہ کاروباری سودے سے حاصل ہونے والی رقم سے ایک خفیہ آف شور ٹرسٹ میں سرمایہ کاری کا ارادہ رکھتے تھے۔ مونس الٰہی 2007 میں اپنے خاندان کی پھالیہ شوگر ملز کی زمین کی فروخت سے حاصل ہونے والی رقم سے سرمایہ کاری کرنا چاہتے تھے۔آف شور سروسز فراہم کرنے والی کمپنی نے انہیں پاکستانی ٹیکس حکام کو آگاہ کرنے کا مطالبہ کیا تھا۔ مونس الٰہی نے کمپنی سے کہا تھا کہ انہوں نے یہ رقم برطانیہ میں اپنی بیویوں کو بھیجنی ہے تاہم پھر مونس الٰہی نے اس ٹرسٹ کو ختم کردیا تھا ۔

مزید :

قومی -