پنڈورا پیپرزمیں نام آنے کے بعد فیصل واؤڈا نے بڑا اعلان کردیا 

پنڈورا پیپرزمیں نام آنے کے بعد فیصل واؤڈا نے بڑا اعلان کردیا 
پنڈورا پیپرزمیں نام آنے کے بعد فیصل واؤڈا نے بڑا اعلان کردیا 

  

 کراچی (ڈیلی پاکستان آن لائن) پنڈورا پیپرز میں نام آنے اور حکومت کی جانب سے تحقیقاتی سیل قائم کرنے پر پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) کے رہنما سینیٹر فیصل واؤڈا نے رد عمل دے دیا اور خود کو سب سے پہلے انکوائری کے لیے پیش بھی کر دیا۔

 تفصیلات کےمطابق مائیکروبلاگنگ ویب سائٹ ٹویٹرپراپنے پیغام میں سینیٹرفیصل واؤڈا نے کہا کہ پنڈورا پیپرز کی انکوائری کے فیصلے کا خیر مقدم کرتا ہوں،یہ فیصلہ صرف عمران خان صاحب ہی کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ میں وزیراعظم سے درخواست کر تا ہوں کہ انکوائری ٹیم اس پہ 12-14 گھنٹے روزانہ کام کر کےپانچ دن کے اندر نتیجہ دے،انکوائری ٹیم کا طریقہ کار ایسا ہو کہ قوم بھی دیکھ سکے، آغاز مجھ سے کریں، ٹیسٹ کیس بنائیں۔فیصل واوڈا نے کہا کہ میں غلط ثابت ہوا تو سزا دیں اور اگر صحیح ثابت ہوا تو یہ بھی فیصلہ ہو کہ غلط بیانی، بدنامی اور سنسنی پھیلانے والے خود ساختہ نام نہاد تحقیقاتی صحافیوں کو کیا سزا ملے گی؟۔

واضح رہے کہ پنڈورا پیپرز میں 700 پاکستانیوں کے نام ہیں جن میں کاروباری افراد اور سیاسی رہنما بھی شامل ہیں، پنڈورا پیپرز میں وزیر خزانہ شوکت ترین،مونس الہیٰ،علیم خان اور فیصل واوڈا کا بھی نام ہے جبکہ دیگر میں خسرو بختیارکے بھائی عمر بختیار،عارف نقوی،راجہ نادر پرویز،محمد علی ٹبہ،میر خالد آدم، کچھ کاروباری اور بینکاری شخصیات کے نام بھی شامل ہیں۔ پاک فضائیہ کے سابق سربراہ عباس خٹک کے 2 بیٹوں کےنام آف شور کمپنیاں نکل آئیں جبکہ جنرل (ر) خالد مقبول کے داماداحسن لطیف،کاروباری شخصیت طارق سعیدسہگل،جنرل (ر) شفاعت اللہ کی اہلیہ کے نام شامل ہیں۔عمر بختیار نے آف شور کمپنی کے ذریعہ ایک ملین ڈالر کا اپارٹمنٹ اپنی والدہ کے نام پر منتقل کیا،عمر بختیار نے 2018ءمیں لندن کے علاقے چیلسی میں اپارٹمنٹ والدہ کے نام پر منتقل کیا۔ پاکستانی شخصیات میں شوکت ترین اور ان کے خاندان کے نام 4 آف شور کمپنیاں نکلی ہیں،عبدلعلیم خان کی ایک،شرجیل میمن کی تین،علی ڈار کی دو ،مونس الٰہی کی دو اورفیصل واوڈا کی ایک آف شور کمپنی نکلی ہے۔

مزید :

قومی -