گلوکار حبیب ولی محمد طویل علالت کے بعد امریکہ میں انتقال کر گئے

گلوکار حبیب ولی محمد طویل علالت کے بعد امریکہ میں انتقال کر گئے

لاس اینجلس (آئی این پی )منفرد آواز کے مالک اور متعدد لافانی نغموں کے خالق گلوکار حبیب ولی محمد طویل علالت کے بعد امریکہ میں انتقال کر گئے ۔ وہ امریکی شہر لاس اینجلس کے ایک ہسپتال میں انتقال کرگئے ۔ ان کی عمر 93 برس تھی۔ حبیب ولی محمد برما کے شہر رنگون میں پیدا ہوئے تھے۔ بعد ازاں ان کا خاندان ممبئی منتقل ہو گیا تھا۔پاکستان بننے کے بعد وہ کراچی میں آباد ہو گئے تھے۔حبیب ولی محمد کو مشہور غزل ’لگتا نہیں ہے جی مرا اجڑے دیار میں‘ پر بےحد شہرت ملی۔ اپنے ایک انٹرویو میں حبیب ولی محمد نے انکشاف کیا تھا کہ انھوں نے بمبئی میں ہونے والے ایک مقابلے میں یہ غزل گا کر پہلا انعام حاصل کیا۔ اس مقابلے میں 1200 گلوکاروں نے حصہ لیا تھا اور ان میں مشہور فلمی گائیک مکیش بھی شامل تھے۔اس کے بعد انھوں متعدد نغمے اور غزلیں گائیں جو عوام و خواص میں یکساں مقبول ہوئیں۔ ان کی مشہور غزلوں میں ’یہ نہ تھی ہماری قسمت،‘ ’کب میرا نشیمن اہلِ چمن،‘ اور ’آج جانے کی ضد نہ کرو،‘ وغیرہ شامل ہیں۔حبیب ولی محمد نے فلمی گیت بھی گائے، تاہم ان کی آواز غزل کے زیادہ موزوں تھی، اور یہی ان کی اصل وجہِ شہرت بنی

حبیب ولی محمد

مزید : صفحہ اول